الیکشن 18ء، ملی مسلم لیگ کا ملک بھر میں امیدوارنامزد کرنے کا اعلان

الیکشن 18ء، ملی مسلم لیگ کا ملک بھر میں امیدوارنامزد کرنے کا اعلان

لاہور (آن لائن)ملی مسلم لیگ کے صدر سیف اللہ خالد نے2018کے الیکشن میں قومی و صوبائی اسمبلی کی تمام نشستوں پر امیدوارنامزد کرنے کا اعلان کیا اور کہا ہے کہ 23مارچ کو مینار پاکستان گراؤنڈ میں ہونے والے تاسیسی اجلاس میں ملی مسلم لیگ کے منشور کا اعلان کریں گے۔ہماری سیاست کی بنیاد ناقابل تسخیر پاکستان کا قیام ہے ۔ استحکام پاکستان کے لئے کشمیر کی آزادی بنیادی حیثیت رکھتی ہے۔ہم محبتوں کا پیغام لے کر آئے ہیں۔فرقہ واریت کا خاتمہ اور قوم کو ایک ملت بنائیں گے۔اقلیتوں اورخواتین کو حقوق دیں گے۔قریہ قریہ،گلی گلی جائیں گے اور ملی مسلم لیگ کا پرچم لہرائیں گے۔ملک بھر میں کارکنان آئندہ انتخابات کی تیاری کریں۔ خواجہ آصف پر سیاہی اور نواز شریف پر جوتا پھینکنے کے واقعہ کی مذمت کرتے ہیں ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ملی مسلم لیگ لاہور کے زیر اہتمام مقامی شادی ہال میں نظریہ پاکستان ہی بقائے پاکستان کے عنوان سے منعقدہ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔سیمینار سے ابوالہاشم ربانی،فیصل غزنوی،میاں عبدالوحید ،ارشد بھٹی،ملک الطاف حسین اعوان،عبدالمجید اسلم ،الیاس پادری ،اشفاق بھٹی مسیح ،میاں محمد محمود،منور علی،ڈاکٹر محمد اشفاق ایڈوکیٹ،چوہدری محمد نوید ایڈوکیٹ ،میاں محمد افضل،مولانا ادریس فاروقی،حافظ مسعود الرحمان جانباز نے بھی خطاب کیا۔شرکاء پاکستان کا مطلب کیا ،لاالہ الااللہ،ملی مسلم لیگ سے رشتہ کیا ،لاالہ الااللہ،ہاتھوں میں ہاتھ دو ملی مسلم لیگ کا ساتھ دو و دیگر نعرے لگاتے رہے۔ملی مسلم لیگ کے صدر سیف اللہ خالد نے کہا کہ دنیا کے ساتھ برابری کی بنیاد پر خارجہ پالیسی کو استوار کریں گے۔پاکستان کو بیرونی قرضوں کی لعنت سے نجات دلوائیں گے۔پاکستان لاالہ الااللہ کے نام پر بنااور اسی نام سے ملک بچائیں گے۔کسی کی مخالفت کرنے کی بجائے اللہ کے دین کی دعوت لے کر نکلے ہیں۔مجھے آج کے کامیاب سیمینار سے حوصلہ ملا جس سفر کا ہم آغاز کر رہے ہیں ان شاء اللہ یہ قافلہ ،کارواں جو آج لاہور کے قرطبہ چوک میں جذبوں کے ساتھ موجود ہے چلے گا تو کراچی تک ،کوئٹہ تک،پشاور،گلگت بلتستان تک چلے گا۔یہ نظریہ پاکستان کا کارواں ،محبتوں ،الفتوں ،عقیدتوں کا قافلہ ہے۔ہم امت کو جوڑنے اور پاکستان کی بائیس کروڑ عوام کو ایک ملت قرار دے کر دشمنوں کے مقابلے میں کھڑے کرنے کی تحریک ہے۔یہ کل بھی کامیاب تھی ،آج بھی کامیاب ہے اور آنے والے کل بھی کامیابیاں حاصل کرے گی۔انہوں نے کہا کہ تین دن قبل اسلام آباد ہائیکورٹ نے ملی مسلم لیگ کے حق میں فیصلہ دیا۔یہ پاکستان،نظریہ پاکستان اور پوری قوم کی فتح ہے۔ آج ہم ایک نئے عزم،نئے جذبے سے عظیم سفر کا آغاز کر رہے ہیں۔زندگی کے آخری سانس تک ملی مسلم لیگ کا ساتھ رہے گا۔سیف اللہ خالد نے کہاکہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے الیکشن کمیشن کو آرڈر جاری کئے ہیں کہ ملی مسلم لیگ کو پاکستان کی سیاست میں کردار ادا کرنے کا موقع دیا جائے۔2018کے الیکشن کی تیاری بھرپور انداز میں شروع کر دی۔پورے ملک میں ہر صوبائی اورقومی حلقے میں امیدوار لائیں گے ۔اس کے لئے ایسے امیدواروں کا چناؤ کیا جائے گا جو نظریہ پاکستان اورکشمیریوں کی جدوجہد آزادی کا حامی ہو،الیکشن لڑنے کے لئے ذاتی وسائل رکھتا ہواورجس حلقے سے لڑنا چاہتا ہے وہاں اس کا ذاتی ووٹ بینک بھی ہو۔23مارچ کو لاہور میں ملی مسلم لیگ کا تاسیسی اجلاس کرنے والے ہیں۔مینار پاکستان پر تاسیسی اجلاس منعقد کراور اپنے منشور کا اعلان کریں گے۔انہوں نے کہاکہ کسان کو اس کا بنیادی حق اورصنعتکاروں وتاجروں کو سستی بجلی ملنی چاہیے تا کہ صنعتوں کا پہیہ تیز رفتاری سے چلے۔کسان خوشحال ہو گا تو مزدوروں کو پسینہ خشک ہونے سے پہلے ان کا حق ملے گا۔ملی مسلم لیگ اقلیتوں کو بھی حقوق دلوائے گی۔ ہماری سیاست کی بنیاد ناقابل تسخیر پاکستان کا قیام ہے ۔ملی مسلم لیگ کے رہنما ابوالہاشم ربانی نے کہا کہ ہمارا مقصد وہ معاشرہ،اقتداراورتہذیب و ثقافت لانا ہے جو مدینہ میں نبی کریم ﷺ لائے تھے۔خواتین اوراقلیتوں کو حقوق ملیں گے۔مسلم لیگ (ن) کے مقامی رہنماؤں ارشد بھٹی، ملک الطاف حسین اعوان اور عبدالمجید اسلم نے ملی مسلم لیگ کی حمایت کا اعلان کیا اور کہا کہ آئندہ انتخابات میں وہ اس کا ساتھ دیں گے۔ معروف سماجی رہنما فیصل غزنوی، میاں عبدالوحید،مسیحی رہنما الیاس پادری، آل پاکستان اتحاد لیگ کے سینئر نائب صدر اشفاق بھٹی مسیح ، میاں محمد محمود ، منور علی، ڈاکٹر محمد اشفاق ایڈوکیٹ ،چوہدری محمد نوید ایڈوکیٹ ودیگر نے کہاکہ ملی مسلم لیگ میں شامل ہونے والوں نے آج تاریخی فیصلہ کیا۔فرقہ واریت کے خاتمے کے لئے ملی مسلم لیگ کا ساتھ دیا جائے۔وکلاء برادری بھی مکمل حمایت کا اعلان کرتی ہے۔

مزید : علاقائی