معروف خاتون ریسلر فحش فلمیں بنانے پر مجبور ہوگئی کیونکہ۔۔۔

معروف خاتون ریسلر فحش فلمیں بنانے پر مجبور ہوگئی کیونکہ۔۔۔
معروف خاتون ریسلر فحش فلمیں بنانے پر مجبور ہوگئی کیونکہ۔۔۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاس اینجلس(نیوز ڈیسک)ریسلنگ کی دنیا میں اپنا ایک مقام رکھنے والی معروف امریکی خاتون ریسلر ٹیمی سکائتھس پر عجب افتاد پڑی کہ وہ ریسلنگ کو چھوڑ کر فحش فلموں کی شرمناک دنیا کا حصہ بن گئی۔ ٹیمی کا کہنا ہے کہ ان کی منشیات کی لت اور مالی مشکلات نے انہیں ریسلنگ سے فحش فلموں کی جانب دھکیل دیا لیکن یہ فیصلہ ان کی زندگی میں آسانی کی بجائے مزید مشکلات کا سبب بن گیا۔

متعدد الزامات کے تحت انہیں گرفتار کیا گیا لیکن بعد ازاں وہ پرول پر رہا ہو گئیں۔ پرول کے خاتمے کے باوجود عدالت میں پیش نا ہونے پر گزشتہ ماہ توہین عدالت کے جرم میں انہیں ایک بار پھر گرفتار کر لیا گیا۔ امریکی میڈیا کے مطابق ٹیمی کا پرول اگست 2017ءمیں ختم ہوگیا تھا جس کے بعد سے وہ مفرور تھی۔

گزشتہ کچھ عرصے کے دوران ٹیمی کی بار بار قانون نافذ کرنے والے اداروں سے مڈھ بھیڑ ہوتی رہی ہے۔ ریسلنگ نیوز سائٹ TW انسائیڈر کے مطابق جج جوزف متیکا نے گزشتہ سال ریاست پنسلوانیا میں ٹیمی کی گرفتاری کا حکم جاری کیا تھا۔ دریں اثناءوہ فرار ہوکر ریاست نیوجرسی چلی گئیں اور کئی ماہ تک پولیس کو چمکہ دیتی رہیں۔ بالآخر پولیس اس تک جا پہنچی اور اب وہ مان ماﺅتھ کاﺅنٹی جیل میں قید ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس