پائلٹ کے بعد ایک اور بھارتی شہری کو پاکستان نے رہا کردیا، بھارتی حکام کے حوالے

پائلٹ کے بعد ایک اور بھارتی شہری کو پاکستان نے رہا کردیا، بھارتی حکام کے ...
 پائلٹ کے بعد ایک اور بھارتی شہری کو پاکستان نے رہا کردیا، بھارتی حکام کے حوالے

  

راولپنڈی (ڈیلی پاکستان آن لائن)بھارتی پائلٹ ابھی نندن کو بھارت کے حوالے کرنے کے بعد پاکستان نے اب تین سال سے قید بھارتی شہری کواڈیالہ جیل سےرہاکردیا جسے واہگہ بارڈر پر بھارتی حکام کے حوالے کردیاگیا۔

روزنامہ جنگ کے مطابق  ہوم سیکرٹری پنجاب کے حکم پر اتوار اور پیرکی درمیانی رات غلام قادرولدعبدالرحیم کو رہا کر دیا گیا، رہا ئی کے بعدبھارتی شہری کوپولیس اورجیل سیکورٹی عملہ کی نگرانی میں لاہوربھیج دیاگیاجہاں سے اسے واہگہ بارڈرکے راستے بھارتی حکام کے حوالے کردیاگیا ۔ بھارتی باشندہ کو 11 نو مبر2015کوسکیورٹی ایکٹ کے تحت گرفتارکرکے اڈیالہ جیل منتقل کیاگیاتھا۔

دوسری طرف روزنامہ دنیا کے مطابق قیدی بھارتی نہیں بلکہ مقبوضہ کشمیر کا شہری ہے جو  2012 میں غیر قانونی طریقے سے آزاد کشمیر میں داخل ہوا تھاتاہم اس کے پاس بھارتی پاسپورٹ موجود تھا  جس پر اسے قید کی سزا سنائی گئی تھی جسے سزا مکمل ہونے پر رہا کیا گیا۔ اڈیالہ جیل میں سزا مکمل کرنے کے بعد پاکستان نے غلام قدیر کی حوالگی کے لیے بھارت سے رابطہ کیا تھا، جہاں سے تصدیق کئے جانے کے بعد غلام قدیر کو جذبہ خیر سگالی کے تحت واہگہ سرحد پر بھارتی حکام کے حوالے کردیا گیا۔

واضح رہے کہ پاکستان وقتاً فوقتاً بھارتی باشندوں کو بھارت کے حوالے کرتا رہتا ہے جس کا ایک ثبوت طیارے سمیت پاکستان میں گھسنے کی کوشش کرنیوالی بھارتی پائلٹ ابھینندن کی واپسی ہے لیکن بھارت میں پاکستانی شہریوں سے ناروا سلوک روا رکھا جاتا ہے۔ابھی نندن کی واپسی کے بعد بھارت نے جیل میں قتل ہونیوالے پاکستانی شہری شاکراللہ کی لاش فراہم کی تھی ۔ 

مزید : بین الاقوامی /جرم و انصاف