لوڈشیڈنگ کے باعث صنعتی یونٹس کی بندش تشویشناک امر ہے، ظہیر بھٹہ

لوڈشیڈنگ کے باعث صنعتی یونٹس کی بندش تشویشناک امر ہے، ظہیر بھٹہ

لاہور(جنرل رپورٹر+ وقائع نگار) چیئرمین لاہور ٹاﺅن شپ انڈسٹریز ایسوسی ایشن ظہیر بھٹہ نے لوڈشیڈنگ کے باعث لاہور کے 165 صنعتی یونٹس بند ہونے پر گہری تشویش کااظہار کرتے ہوئے کہا ہ 10 سے 14 گھنٹے کی لوڈشیڈنگ کے باعث قائداعظم انڈسٹریل ایریا ، سندر انڈسٹریل اسٹیٹ، کٹاربند انڈسٹریل ایریا ودیگر علاقوں میں قائم انڈسٹریل یونٹس کے 80 سے زائد ورکرز کے بے روز گار ہونے کا خدشہ پیدا ہوگیا ہے انہوں نے کہا کہ قائداعظم انڈسٹریل اسٹیٹ(ٹاﺅن شپ انڈسٹریل اسٹیٹ) میں 350 صنعتی یونٹس میں 35 ہزار سے زائد ورکر کام کرتے ہیں لوڈشیڈنگ کی وجہ سے ان میں سے 105 انڈسٹریل یونٹس بند ہوچکے ہیں۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے میاں خرم الیاس سینئر وائس چیئرمین، عامر عطاءباری وائس چیئرمین کے ساتھ ٹاﺅن شپ انڈسٹریز کے صنعتکاروں کے مختلف وفود سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ وزیراعظم کی ہدایات کے مطابق لوڈ شیڈنگ کے دورانیہ میں کمی کرکے یہ دورانیہ 6گھنٹے یا اس سے کم کیا جائے ۔ہر گھنٹے کے بعد بجلی کے بندش سے صنعتی یونٹس کی پیداواری صلاحیت متاثر ہورہی ہیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4