دوکانوں کو مسمار کیا جائے گا،عوام ہمارا ساتھ دیں،جسٹس(ر) منظور سیال

دوکانوں کو مسمار کیا جائے گا،عوام ہمارا ساتھ دیں،جسٹس(ر) منظور سیال

لاہور(جنرل رپورٹر)انجمن حمایت اسلام کے سربراہ جسٹس ریٹائرڈ منظور سیال نے کہا ہے کہ شاہدرہ میں حمایت اسلام شہاب الدین ٹیکنیکل انسٹی ٹیوٹ انجمن ضرور بنائے گی ۔اور اس سلسلے میں ہم نے میاں منیر حاجی شریف کی سربراہی میں اس کالج کی تعمیر کے لیے کمیٹی بنائی تھی کمیٹی کے خلاف شکایات سامنے آنے پر کمیٹی توڑ دی ہے اور ہم نے قبضہ گروپ کو قبضہ سے باز رکھنے کے لیے عدالت سے حکم امتناعی حاصل کر لیا ہے اب اگر ان کی جانب سے تعمیر کی گئی تو دکانیں بھی مسمار کریں گے وہ پاکستان سے گفتگو کر رہے تھے ۔انہوں نے کہا کہ کالج تعمیر کرنے کے لیے انجمن نے فیصلہ کیا تھا کہ جگہ میں واقعہ کمپاؤنڈ کا کچھ حصہ فروخت کر کے آمدن کالج کی تعمیر کے لیے لگائیں گے مگر وہ لوگ جنہوں نے ایسا کرنا تھا انہوں نے ہیرا پھیری کی اور وہ حصہ جسے فروخت نہیں کرنا تھا اس کے خسرہ جات کو دھوکہ دہی سے استعمال کرتے ہوئے مہنگی ترین جگہ کو فروخت کرنا شروع کر دیا اور یاسین گجر نامی شخص نے شروع میں کہا کہ اس کی آمدن 6سے 12کروڑ ہو گی مگر وہ اس پر پورا نہیں اترے اس کام کے لیے سابق ایم این اے میاں منیر اور سابق ایم پی اے حاجی شریف کی سربراہی میں 3رکنی کمیٹی بنائی گئی تھی لیکن کمیٹی بھی ایس او پیز اور معاہدہ کے مطابق کام نہیں کروا سکی اس لیے ہم نے کمیٹی توڑ دی ہے اور عدالت چلے گئے ہیں شاہدرہ کے لوگوں سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ اپنے بچوں کے روشن مستقبل اور کالج کی تعمیر کو یقینی بنانے کے لیے اور انجمن کی جگہ قبضہ گروپوں سے بچانے کے لیے ہمارا ساتھ دیں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...