ایگزم بینک چائنہ اورنج ٹرین منصوبہ کے لئے قرض کی پہلی قسط جاری کر دی

ایگزم بینک چائنہ اورنج ٹرین منصوبہ کے لئے قرض کی پہلی قسط جاری کر دی

لاہور(اپنے نمائندے سے)وزیر اعلی پنجاب محمد شہباز شریف کی طرف سے لاہور اورنج لائن میٹرو ٹرین منصوبے پر کام کی رفتار اور معیار کا جائزہ لینے کے لئے بنائی جانے والی سٹیئرنگ کمیٹی کے چیئرمین خواجہ احمد حسان نے بتایا ہے کہ اورنج لائن منصوبے کے لئے ایگزم بنک آف چائنہ نے قرض کی پہلی قسط جاری کر دی ہے اور ساڑھے پانچ ارب روپے منصوبے کے چینی کنٹریکٹر سی آر نورنکو کے اکاؤنٹ میں منتقل کر دئیے ہیں ۔ شہر کے گنجان علاقوں سے گزرنے و الی اورنج لائن ٹرین کے آغا زپر روزانہ اڑھائی لاکھ افراد سفر کریں گے اورصرف تین سال بعد ان مسافروں کی یومیہ تعداد پانچ لاکھ سے بھی تجاوزکر جائے گی ۔یہ منصوبہ شہریوں کو سفر کی جدید ‘ با وقار اور سستی سہولت مہیا کر کے ملک کا ٹرانسپورٹ کلچر تبدیل کر دے گا۔ وہ گزشتہ روز منصوبے پر جاری کام کی رفتار کا جائزہ لینے کے لئے منعقدہ سٹیرنگ کمیٹی کے اجلاس کی زیر صدارت کر رہے تھے ۔ اجلاس کو بتا یا گیا کہ منصوبے کا تعمیراتی کام شیڈول کے مطابق جاری ہے‘تیس فی صد تعمیراتی کام مکمل کیا جا چکا ہے ‘ منصوبے کی معیاری تکمیل کی نگرانی کے لئے چائنہ انجینئرنگ کنسلٹنٹس اور سی آر نورنکو کے انجینئرز لاہور پہنچ گئے ۔خواجہ احمد حسان نے ہدایت کی کہ اور نج لائن منصوبے پر عمل درآمد کے دوران حساس مقامات بالخصوص ہسپتالوں اور سکولوں کو بجلی ‘ پانی ‘ گیس اور دیگر سروسز کی بلا تعطل فراہمی کے لئے ایس او پیز تیار کئے جائیں اور ان سروسز کی منتقلی یا بندش کے بارے میں متعلقہ ہسپتالوں یا سکولوں کو قبل از وقت آگاہ کر کے انہیں متبادل ذرائع سے ان سروسز کی فراہمی کا انتظا م کیا جائے۔اجلاس میں ایم پی اے چوہدری شہباز احمد ‘کمشنر لاہور عبد اللہ سنبل ‘ڈی سی او محمد عثمان‘سی ٹی او طیب حفیظ چیمہ ‘چیف انجینئر ایل ڈی اے اسرار سعید ‘ایم ڈی واسا چوہدری نصیر احمد‘ نیسپاک‘ لیسکو ‘سوئی گیس ‘پی ٹی سی ایل ‘پی ایچ اے اور دیگر محکموں کے نمائندوں نے شرکت کی ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...