اپ گریڈ یشن کیس ، سپریم کورٹ نے سندھ حکومت کو نوٹسز جاری کر دیئے

اپ گریڈ یشن کیس ، سپریم کورٹ نے سندھ حکومت کو نوٹسز جاری کر دیئے

 اسلام آباد (آن لائن) سپریم کورٹ نے سندھ انفارمیشن ڈیپارٹمنٹ کی خاتون ڈائریکٹر زینت جہاں کی درخواست پر سیکرٹری انفارمیشن سندھ کو نوٹس جاری کرتے ہوئے سیکرٹری انفارمیشن زینت جہاں کی اپ گریڈیشن کے معاملہ پر وضاحت طلب کر لی ہے جبکہ حکم دیا ہے کہ عدالت کی اجازت کے بغیر زینت جہاں کو انکے عہدے سے ہٹایا یا کسی دوسری جگہ تبدیل نہ کیا جائے۔مقدمہ کی سماعت جسٹس امیر ہانی مسلم کی سر براہی میں تین رکنی بینچ نے کی،کارروائی شروع ہوئی تو جسٹس امیر ہانی مسلم نے ریمارکس دیئے کہ زینت جہاں نے اپنی درخواست میں سیکرٹری انفارمیشن کی بہت تعریفیں کیں ہیں،کیوں نہ یہ کیس نیب کو بھیج دیں، جس پر ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل سندھ نے عدالت کو بتایا کہ سابق سیکرٹری ذوالفقار شیوانی کا مقدمہ پہلے ہی نیب میں چل رہا، جس پر جسٹس امیر ہانی مسلم نے کہا کہ اس کا مطلب ہے زینت جہاں نے درخواست میں جو تعریفیں کیں ہے وہ درست ہے ہیں ایڈشنل ایڈووکیٹ جنرل سندھ نے کہا کہ خاتون کی اپ گریڈیشن کے معاملہ پر تحریری جواب دے دیتے ہیں،جب تک کیس کا فیصلہ نہیں ہوتا زینت جہاں کو عہدے سے نہ ہٹایا جائے، ایڈیشنل ایڈووکیٹ نے جنرل سندھ کے دلائل مکمل ہونے کے بعد فاضل عدالت نے مقدمہ کی سماعت دو ہفتوں کے لیے ملتوی کر دی ہے۔

مزید : علاقائی


loading...