ڈاکٹر عاصم کیس کی سماعت، تفتیشی افسر پر جانبداری کا الزام ثابت نہیں ہوا: عدالت، بھارت میں جائیداد ثابت کر دیں تو بطور تحفہ دیدوں گا: ڈاکٹر عاصم

ڈاکٹر عاصم کیس کی سماعت، تفتیشی افسر پر جانبداری کا الزام ثابت نہیں ہوا: ...
ڈاکٹر عاصم کیس کی سماعت، تفتیشی افسر پر جانبداری کا الزام ثابت نہیں ہوا: عدالت، بھارت میں جائیداد ثابت کر دیں تو بطور تحفہ دیدوں گا: ڈاکٹر عاصم

  


کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) عدالت نے ڈاکٹر عاصم کیس میں دہشت گردوں کے علاج سے متعلق معاملے پر تفتیشی افسر پرجانبداری کے الزام کو مسترد کر دیا ہے اور کیس کی سماعت 16 مئی تک ملتوی کر دی گئی ہے۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

انسداد دہشت گردی عدالت میں ڈاکٹر عاصم کیس میں دہشت گردوں کے علاج سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔ ڈاکٹر عاصم حسین، انیس قائم خان، قادر پٹیل اور ایم کیو ایم کے نامزد میئر وسیم اختر عدالت میں پیش ہوئے۔ عدالت نے اپنے فیصلے میں کہا کہ تفتیشی افسر پر تحقیقات میں جانبداری کا الزام ثابت نہیں ہوا۔

روزنامہ پاکستان کی خبریں اپنے ای میل آئی ڈی پر حاصل کرنے اور سبسکرپشن کیلئے یہاں کلک کریں

ڈاکٹر عاصم نے عدالت کے روبرو کہا کہ بھارت میں جائیداد بنانے کا الزام لگانے والے ثابت کریں اور اگر وہ اس میں کامیاب ہو گئے تو جائیداد بطور تحفہ دیدیں گے۔ عدالت نے کیس کی سماعت 16 مئی تک ملتوی کر دی ہے۔

مزید : کراچی /اہم خبریں


loading...