پشاور پولیس کی اشتہاری ملزمان کیخلاف کریک ڈاؤن، 1ہزار سے زائد گرفتار

پشاور پولیس کی اشتہاری ملزمان کیخلاف کریک ڈاؤن، 1ہزار سے زائد گرفتار

  

پشاور(کرائم رپورٹر)کیپٹل سٹی پولیس پشاور نے سنگین جرائم میں مطلوب اشتہاری ملزمان کے خلاف خصوصی مہم کے دوران ایک ہزار سے زائد اشتہاری ملزمان کو گرفتار کر لیا، پولیس کی جانب سے حالیہ مہم کے دوران قتل، اقدام قتل، راہزنی، ڈکیتی، اغوائیگی اور دیگر سنگین جرائم میں مطلوب ملزمان کو خصوصی طور پر نشانہ بنایا گیا ہے، حالیہ مہم کے دوران مجموعی طور پر کینٹ ڈویژن پولیس نے پہلی، سٹی ڈویژن اور صدر ڈویژن پولیس نے بالترتیب دوسری اور تیسری پوزیشن حاصل کی ہے، ایس ایس پی آپریشنز ظہور بابر آفریدی نے واضح کیا ہے کہ رواں سال کے دوران پشاور پولیس نے اب تک 2147 اشتہاری ملزمان کو گرفتار کیا ہے جن کے خلاف کارروائیاں اسی طرح جاری رہیں گی تفصیلات کے مطابق سی سی پی او محمد علی گنڈا پور کی خصوصی ہدایت پر پشاور پولیس نے ایس ایس پی آپریشن ظہور بابر آفریدی کی نگرانی میں عرصہ دراز سے روپوش خطرناک اشتہاری ملزمان کو گرفتار کرنے کی خاطر خصوصی مہم شروع کیا تھا، گزشتہ پندرہ روز سے جاری مہم کے دوران قتل، اقدام قتل، اغوائیگی، ڈکیتی اور دیگر سنگین جرائم میں مطلوب ایک ہزار سے زائد اشتہاری ملزمان کو گرفتار کیا گیا ہے حالیہ مہم کے دوران ایس پی کینٹ تصور اقبال کی نگرانی میں کینٹ ڈویژن پولیس نے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 410 اشتہاری ملزمان کو گرفتار کرنے پر اول پوزیشن حاصل کی ہے اسی طرح سٹی ڈویژن پولیس اور صدر ڈویژن پولیس نے بالترتیب دوسری اور تیسری پوزیشن حاصل کرتے ہوئے مجموعی طور پر 434 اشتہاری ملزمان کو گرفتار کیا ہے ایس ایس پی آپریشنز ظہور بابر آفریدی نے واضح کیا ہے کہ رواں سال کے دوران اب تک 2147 اشتہاری ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا ہے جو کہ مختلف تھانوں کو سنگین مقدمات میں مطلوب تھے، انہوں نے مزید کہا کہ اشتہاری ملزمان کے خلاف کریک ڈاؤن کا سلسلہ اسی طرح جاری رہے گا

مزید :

پشاورصفحہ آخر -