سندھ حکومت کی جانب سے کاروبار کھولنے کی اجازت پر اجلاس

سندھ حکومت کی جانب سے کاروبار کھولنے کی اجازت پر اجلاس

  

میرپورخاص(بیورورپورٹ) سندھ حکومت کی جانب سے مخصوص چھوٹے کاروبار کھولنے کی اجازت ملنے کے بعد کی صورتحال کے حوالے سے ڈویڑ ن کے ڈپٹی کمشنر میرپورخاص زاہد حسین میمن، ڈپٹی کمشنر تھرپارکر شہزاد طاہر تھہیم، ڈپٹی کمشنر عمرکوٹ ندیم میمن، ایس ایس پی میرپورخاص جاوید بلوچ اور دیگر متعلقہ افسران سے ڈویڑنل کمشنر میرپورخاص عبدالوحید شیخ نے اپنے دفتر میں اجلاس کیا، اس موقع پر انہوں نے ڈپٹی کمشنروں کو سختی سے ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ چھوٹے کاروبار کی اجازت ملنے کے بعد جو بھی بیوپاری ایس او پیز کی خلاف ورزری کرے اس کے خلاف سخت قانونی کاروائی کی جائے دکانداروں اور خریداروں کو فیس ماسک پہننے، سماجی فاصلہ رکھنے، کورونا وائرس پھیلنے سے روکنے کیلئے احتیاطی تدابیر اختیار کرنے پر عمل درآمد کرانے کا پابند بنایا جا ئے،اس موقع پر ڈپٹی کمشنروں نے بتایا کہ میرپورخاص ڈویڑن میں کریانہ،سبزی، پھل، پنسار کی دکانیں اور میڈیکل اسٹورصبح 6بجے سے شام5 بجے تک پوراہفتہ کھلے ہیں مشروط طور پر اجازت ملنے والے چھوٹے کاروبار کمیونٹی مارکیٹ، ریٹیلر دکانیں، گلی محلوں میں موجود دکانیں،کنسٹرکشن اسٹیل پائپ الیکٹریکل پینٹ ریئل اسٹیٹ اور ہارڈویئر کی دکانیں صرف4روز پیر سے جمعرات صبح6بجے سے شام4بجے تک کھلی رہیں گی جبکہ 3روزجمعہ سے اتوار تک سخت لاک ڈاؤن پر مکمل عمل درآمد کرایا جائے گا ممنوعہ بڑی مارکیٹ شاپنگ مالز، پارک، ججام کی دکانیں، بیوٹی پارلر ہرقسم کی پبلک ٹرانسپورٹ دفاتر ہوٹل ریسٹورینٹ شادی ہال سنیما گھر گیم سینٹر جیم اور کلب بند رکھے گئے ہیں جبکہ جلسہ جلوسوں اجتماع پر پابندی برقرار رہے گی، انہوں نے بتایا کہ جس کاروبار کو کھولنے اور بند رکھنے کی اجازت دی گئی ہے اس پر عمل درآمد کرانے کی مکمل کوشش کی جائے گی سیکورٹی کے حوالے سے محکمہ پولیس کا مکمل تعاون شامل ہے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -