شہباز شریف کا نواز شریف،فضل الرحمٰن سے ٹیلیفونک رابطہ،پی ڈی ایم کا عید کے بعد حکومت مخالف احتجاج کا فیصلہ

  شہباز شریف کا نواز شریف،فضل الرحمٰن سے ٹیلیفونک رابطہ،پی ڈی ایم کا عید کے ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


 لاہور،اوکاڑا(نیوزایجنسیاں) حکومت مخالف تحریک چلانے کیلئے مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف نے پارٹی قائد نواز شریف اور مولانا فضل الرحمن سے ٹیلی فونک رابطہ کیا۔ تینوں قائدین نے حکومت کوگھر بھیجنے کے لئے اہم نکات پر تفصیلی مشاورت کی۔عید الفطر کے فوری بعد حکومت مخالف تحریک آگے بڑھانے کا فیصلہ کیاگیا۔پارٹی ذرائع کے مطابق حکومت کے خلاف فیصلہ کن راؤنڈ کے لئے مولانا فضل الرحمن عید الفطر کے بعد تمام پی ڈی ایم میں شامل جماعتوں کے قائدین سے ملاقاتیں کریں گے۔ شہباز شریف حکومت مخالف تحریک میں مرکزی کردار ادا کریں گے۔تینوں رہنماؤں نے ایف آئی اے کی جانب سے شہباز شریف کو روکے جانے کے خلاف عدالت جانے پر اتفاق کیا۔ عید الفطر کے بعد پی ڈی ایم کی سٹیرنگ کمیٹی کے اجلاس میں اے این پی اور پیپلزپارٹی کو دعوت دینے پر گفتگوہوئی،تینوں رہنماؤں نے اس بات پر اتفاق کیاکہ معاملات طے پانے کی صورت میں پیپلز پارٹی اور اے این پی کو پی ڈی ایم کے سربراہی اجلاس میں دعوت دی جائے گی۔عید کے بعد پی ڈی ایم کے سربراہی جلاس کے ایجنڈے پر بھی غور کیا گیا۔شہباز شریف نے پی ڈی ایم ایجنڈے میں مسئلہ کشمیر کو شامل کرنے کا مشورہ دیا،حکومت مخالف تحریک میں مسئلہ کشمیر اہم جزو ہو گا۔دوسری جانب پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے پیپلز پارٹی اور مسلم لیگ ن کو مخالف بیان بازی نہ کرنے کی اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایک دوسرے کے خلاف بیانات سے تلخیاں پیدا ہو رہی ہیں جو ہمارے مشترکہ کاز کو نقصان پہنچا سکتی ہیں۔ ادھر مولانا فضل الرحمن نے پیپلز پارٹی کے قائدین سے بھی رابطہ کیا ہے اور انہیں اپنے اپنے پارٹی کو ایک دوسرے کے مخالف بیان بازی سے روکنے کی اپیل کی ہے جبکہ مولانا فضل الرحمن نے عیدالفطرکے بعدحکومت کے خلاف مضبوط اندازکے ساتھ میدان میں نکلنے کا عندیہ دیدیا ہے۔
شہباز کے رابطے

مزید :

صفحہ اول -