ایم آئی ٹی کی مرکزی مشاورتی کمیٹی میں 5 مزید ممبران کا اضافہ

ایم آئی ٹی کی مرکزی مشاورتی کمیٹی میں 5 مزید ممبران کا اضافہ

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)مہاجر اتحاد تحریک کے چیئرمین ڈاکٹر سلیم حیدر نے ایم آئی ٹی کی مرکزی مشاورتی کمیٹی میں پانچ مزید ممبران کا اضافہ کیا ہے جن میں عبدالوہاب، مختیار قریشی، سجاد حسین، محمد ناصر اور راشد رضوی شامل ہیں۔ اس طرح مشاورتی کمیٹی کے ممبران کی تعداد 15ہوگئی ہے۔ ڈاکٹر سلیم حیدر نے مشاورتی کمیٹی کے ممبران سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ایم آئی ٹی سندھ بھر میں تنظیم سازی کے عمل کو جلد مکمل کرنے کے بعد مہاجر حقوق کیلئے سڑکوں پر آئے گی۔ انہوں نے مہاجر نوجوانوں پر زور دیا ہے کہ وہ سب سے پہلے اپنی تعلیم اور قابلیت پر توجہ دیں، سی ایس ایس سمیت دیگر اعلیٰ سطح پر امتحانوں کی بھرپور تیاری کریں کیونکہ تعلیم ہی مہاجروں کا زیور ہے جو بدقسمتی سے مہاجروں سے چھین لیا گیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ مہاجر نوجوان آگے آکر ایم آئی ٹی میں اپنا کردار ادا کریں اور ان لوگوں کا احتساب کریں جنہوں نے مہاجر قوم کے نہ صرف حقوق غضب کئے ہیں بلکہ مہاجروں کو دیوار سے لگاکر پوری قوم کو مایوسی کی دلدل میں دھکیل دیا ہے۔انہوں نے کہاکہ بدقسمتی سے 35 سال سے مہاجر شخصیت پرستی کے گرد گھومتے رہے اور شخصیت پرستی کی سیاست نے مہاجروں کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا، اب انہیں قوم پرستی کی سیاست کرنی ہوگی۔ آج صرف ایم آئی ٹی ہی مہاجروں کیلئے روشنی کی کرن ہے کیونکہ سندھ کے مہاجر یہ جانتے ہیں کہ ایم آئی ٹی نے مہاجروں کو صحیح سمت کی طرف رہنمائی کی، ہم ان حالات کی نشاندہی 1988ء سے کرتے آرہے ہیں، اس وقت ہمیں مہاجر غدار کہا گیا، ہمیں مختلف لوگوں کا ایجنٹ کہا گیا لیکن وقت نے ثابت کیا کہ کون مہاجر غدار ہے اور کس نے دلالی کرکے مہاجروں کا سودا کیا۔ آج مہاجر مایوسی اور ناامیدی کی دلدل مین پھنسے ہوئے ہیں، ان کے سامنے رہنماؤں کے لبادے میں پیداگیر، بھتہ خور، چائنا کٹنگ اور مہاجروں کی نسل کشی کرنے والے سامنے نظر آتے ہیں لیکن ہم نے پہلے بھی کہا تھا او راب بھی ہمارا موقف ہے کہ مہاجروں کو کسی حال میں تنہا نہیں چھوڑیں گے، ایم آئی ٹی ہی مہاجروں کا متبادل پلیٹ فارم ہے۔ جس کے ذریعے مہاجر اپنے کھوئے ہوئے حقوق حاصل کرسکتا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -