چھاپوں سے تنگ قصابوں کا پنجاب اسمبلی کے سامنے دھرنا

چھاپوں سے تنگ قصابوں کا پنجاب اسمبلی کے سامنے دھرنا

  

                                     لاہور( جنرل رپورٹر) شہر بھر کے قصاب میٹ کمپنی کے چھاپوں کے خلاف سڑکوں پر نکل آئے قصابوں نے دن بھر پنجاب ا سمبلی کے سامنے فیصل چوک مال روڈ پر دھرنا دیا اور میٹ کمپنی اور ضلعی انتظامیہ کے خلاف نعرے بازی جاری رکھی اس دوران قصابوں کے نمائندوں اور ضلعی انتظامیہ میں دھرنا ختم کرنے کے لئے دو مرتبہ مذاکرت بھی ہوئے جو ناکام ہو گئے بعد ازاں قصابوں کی 6رکنی کمیٹی نے ڈی سی اور سے مذاکرت کئے جو رات گئے تک جاری تھے گزشتہ روز شہر بھر کی قصاب برادری نے اپنی ویلفیئر سوسائٹی کے صدر ملک افتخار وسیم اور دیگر راہنماﺅں کی قیادت میں فیصل چوک مال روڈ بند کی بعد ازاں احتجاج دھرنا میں تبدیل کردیا گیااس موقع پر سوسائٹی کے صدر ملک افتخار وسیم نے کہا کہ میٹ کمپنی اور ضلعی انتظامیہ نے قصابوں کا جینا دوبھر کردیا ہے بیمار گوشت کی آڑ میں چھاپے مار کر روزانہ درجنوں دکانداروں کے خلاف مقدمات درج کر لئے جاتے ہیں ےہ سلسلہ بند نہ ہوا تو دھرنا جاری رہے گا انہوں نے کہا کہ ہم مردار گوشت فروخت نہیں کرتے تندرست جانوروں کا گوشت فروخت کرتے ہیں اس آڑ میں ہمارا کاروبار تباہ کیا جارہا ہے درجنوں قصاب چھاپوں پکڑ دھکڑ جرمانوں کے خلاف اپنے کاروبار چھوڑ گئے ہیں ایسا صرف پیمکو کی نشوونما کرنے کے لئےکیا جا رہا ہے غریب قصابوں کا کاروبار سرمایہ داروں کا کاروبار چمکانے کے لئے بند کیا جارہا ہے اس حوالے سے ڈی سی او لاہور کیپٹن (ر) عثمان نے کہا کہ قصابوں کے جائز مطالبات تسلیم کئے جائیں گے جو تندرست گوشت فروخت کرتے ہیں انہیں تحفظ دیا جائے گا بیمار گوشت فروخت کرنے والوں کے خلاف کارروائی جاری رہے گی تمام قصاب سرکاری مذبح خانے سے گوشت ذبح کروائیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -