تین افراد کا ہسپتال ملازم پر تشدد ،لہو لہان کر کے فرار

تین افراد کا ہسپتال ملازم پر تشدد ،لہو لہان کر کے فرار

  

لاہور(کر ائم سیل)زیر تعمیر راستے سے گاڑی گزارنے سے منع کر نے پر 3افراد کا سروسز ہسپتال کے ملازم پر تشدد لہو لہان کر کے فرار ہو گئے۔متاثرہ ملازم نے انصاف کے حصول کے لئے تھانے میں درخواست دے دی ۔تفصیلا ت کے مطابق سروسز ہسپتال کا ملازم محمد اقبال 4نمبر گیٹ پر سٹر ک پر پڑے ہو ئے گڑھے کو بھرنے کے لیے سیمنٹ ڈال رہا تھا اور اردگرد اینٹیں رکھ کر آدھا راستہ روک رکھا تھا جبکہ آنے والی ٹریفک باقی راستے سے گزر رہی تھی۔اتنے میں گاڑی نمبری 3313میں سوار 3افراد نے اینٹوں کے اوپر سے گاڑی گزار دی جس سے سڑک کا تعمیر کیا ہوا حصہ خراب ہو گیا جس پر محمد اقبال نے ان افراد کو کہا کہ تم نے ایسا کیوں کیا جس پر وہ غصہ میں آگئے اور انہوں نے محمد اقبال کو تشدد کا نشانہ بنا یا جس سے وہ بے ہوش ہو گیا اور اس کو فوری طبی امداد کے لئے سروسز ہسپتال لے جا یا گیا جہاں ہوش میں آنے کے بعد اس نے روز نامہً پاکستانً سے گفتگو کرتے ہو ئے کہاکہ غنڈہ عنا صر نے دوران ڈیوٹی مجھ پر تشدد کر کے میرے ساتھ سخت زیادتی کی ہے میری اعلیٰ احکام سے اپیل کہ مجھے انصاف دلا یا جا ئے ۔جبکہ زخمی کے ساتھی محمد رفیق کا کہنا تھا کہ اگر ان جیسے عنڈہ عناصر کے خلاف کاروائی نہ کی گئی تو ہر دوسرا بندہ ہسپتال ملازمین پر ہا تھ اٹھا ئے گا۔

مزید :

علاقائی -