رحیم یارخان جلسہ کے بعد ن لیگ، پیپلزپارٹی کے درباریوں کی ٹانگیں کانپنے لگیں،اعجاز چودھری

رحیم یارخان جلسہ کے بعد ن لیگ، پیپلزپارٹی کے درباریوں کی ٹانگیں کانپنے ...

لاہور(نمائندہ خصوصی)پاکستان تحریک انصاف پنجاب کے صدر اعجازاحمدچوہدری، جنرل سیکرٹری پنجاب ڈاکٹریاسمین راشد، ڈپٹی سیکرٹری اطلاعات ملک اعظم نے اپنے مشترکہ بیان میں کہاہے کہ رحیم یارخان کے جلسے کے بعد (ن) لیگ اور پیپلزپارٹی کے درباریوں کے ٹانگیں کانپناشروع ہو گئی ہیں ،تحریک انصاف کے بڑے جلسوں سے یہ ثابت ہو رہا ہے کہ حکمرانوں کو عوام نے بُری طرح مسترد کردیا ہے اور ان کو معلوم ہوگیا ہے کہ عوام ہمارے ساتھ نہیں عمران خان کے ساتھ ہے، انہوں نے کہاکہ پیپلزپارٹی اور (ن) لیگ کے درباری شاہ سے زیادہ شاہ کے وفادار نہ بنیں ،عمران خان پر تنقید کرنے سے پہلے اپنے گریبانوں میں جھانکیں ، انتخابات میں ان دونوں جماعتوں کے درباریوں کی ضمانتیں ضبط ہو جائیںگی، رحیم یار خان کے جلسے کوناکام کہنے والے دونوں جماعتوں کے درباریوں کی بوکھلاہٹ ظاہر کرتی ہے ،رحیم یارخان کی تاریخ کا جلسہ سب سے بڑ اجلسہ تھا اس سے پہلے (ن) لیگ اور پیپلزپارٹی اتنا بڑا جلسہ نہیں کر سکیں، انہوں نے کہاکہ ننکانہ صاحب کی غیور عوام آج عمرا ن خان کا تاریخی استقبال کرے گی ، ننکانہ صاحب کی غیور عوام عمران خان کا بے تابی سے انتظار کررہی ہے ،بعدازاں صوبائی سیکرٹریٹ میں شیخوپورہ ، دیپالپور، فیصل آبادسمیت دیگر اضلاع سے آئے ہوئے پارٹی وفود نے اعجازاحمدچوہدری سے ملاقات کی ، ملاقات میں پارٹی امور پر تبادلہ خیال کیا، اس موقع پر شبیرسیال، عامر مجید، چوہدری وسیم دیگر پارٹی رہنماءبھی موجود تھے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...