یونس ٹیسٹ کپتان ہونا چاہیے، ٹیم میں سارا گند وقار یونس نے ڈالا: سابق چیف سلیکٹر محمد الیاس

یونس ٹیسٹ کپتان ہونا چاہیے، ٹیم میں سارا گند وقار یونس نے ڈالا: سابق چیف ...
یونس ٹیسٹ کپتان ہونا چاہیے، ٹیم میں سارا گند وقار یونس نے ڈالا: سابق چیف سلیکٹر محمد الیاس

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)قومی کرکٹ ٹیم کے سابق چیف سلیکٹر محمد الیاس نے کہا ہے کہ یونس کو سلیوٹ کرتا ہوں، مصباح کے بعد انہیں ہی ٹیسٹ کا کپتان ہوناچاہیے وہ بہت خوددار آدمی ہے کسی کے دباؤ میں آکر استعفیٰ نہیں دیا جبکہ ٹیم میں سارا گند وقار یونس نے ڈالا ہے۔

نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے سابق چیف سلیکٹر کا کہنا تھا کہ سلیکشن کمیٹی نے یونس خان کو ون ڈے ٹیم کا حصہ بنا کر بالکل درست فیصلہ کیا کیونکہ اس کا تجربہ اور کارکردگی ٹیم کیلئے فائدہ مند ہے۔یونس خان کو مصباح الحق کی ریٹائرمنٹ کے بعد قومی ٹیسٹ ٹیم کا کپتان بنایا جانا چاہیے ۔ یونس خان کریز پر موجود ہو تو دوسرے کھلاڑیوں کے ساتھ مکمل تعاون کرتا ہے اور ’اینڈ ‘ تبدیل کرکے بولرز کو پریشان کیے رکھتا ہے یونس کی ریٹائرمنٹ قومی ٹیم کیلئے بہت بڑا نقصان ہے اور اس کی کمی ہمیشہ محسوس ہوتی رہے گی۔

سابق چیف سلیکٹر نے قومی ٹیم کے ہیڈ کوچ وقار یونس پرالزامات کی بوچھاڑ کرتے ہوئے کہا کہ وہ ایک ناکارہ شخص ہے جو ٹیم کو کبھی بھی ابھرنے نہیں دے گا۔وقار یونس کی وجہ سے ٹیم میں سب گڑ بڑ ہے وہ چاہتا ہے کہ سب لوگ میرے انگوٹھے کے نیچے رہیں اور میرے جوتے اٹھائیں۔وقار یونس نے ٹیم میں بہت گند ڈالا ہے نوجوان کھلاڑیوں کی آڑ لے کر اپنی پسند کے لوگوں کو ٹیم میں منتخب کراتاہے جو ٹیم کیلئے نقصان کی بات ہے۔

مزید :

کھیل -