شیخوپورہ ، 2سیاسی گروپوں مین تصادم ، شہر بھر میں خوف و ہراس پھیل گیا

شیخوپورہ ، 2سیاسی گروپوں مین تصادم ، شہر بھر میں خوف و ہراس پھیل گیا

  

شیخوپورہ(بیورورپورٹ)شیخوپورہ کی وارڈ نمبر 37 میں دوسیاسی گروپوں کے درمیان تلخ کلامی طول پکڑ گئی جس سے محلہ سلطان پورہ سمیت شہر بھر میں شدید خوف وہراس پھیل گیا پولیس کی بھاری نفری اور دیگر سکیورٹی فورسز نے ڈی ایس پی سٹی سرکل راجہ فخر بشیر کی قیادت میں موقع پر پہنچ کر مشتعل افراد کو منتشر کیا پی ٹی آئی کی قیادت کنور عمران سعید ایڈووکیٹ ،چوہدری سعیدورک،الحاج ملک محمد اسلم بلوچ ،شیخ زین ندیم ،ملک حبیب سلطان کھوکھرودیگر نے میڈیا کو بتایا کہ ایم این اے میاں محمد جاوید لطیف انکے بھائیوں اور دیگر مسلح افراد نے پی ٹی آئی کے امیدوار علی عرفان منج کے محلہ سلطان پورہ چوک میں لگے انتخابی کیمپ کو اکھاڑنے کی کوشش کی جہاں پر دونوں پارٹیوں میں کے درمیان معمولی ہاتھا پائی شروع ہوئی جو دیکھتے ہی دیکھتے ڈنڈوں سوٹوں کی شکل میں بہت بڑا جھگڑا بن گیا یہاں سے پی ٹی آئی کے علی عرفان منج کے مقابلہ میں سٹی ایم این اے میاں محمد جاوید لطیف کے بھائی میاں امجد لطیف (ن) لیگ کی ٹکٹ سے بلدیاتی لیکشن لڑ رہے ہیں ،اس حلقہ میں جھگڑے کی اصل وجہ منج گروپ اور ایم این اے گروپ کے درمیان ہونے والا کانٹے دار مقابلہ ہے یہاں پر جھگڑے کے بعد پولیس کی مداخلت سے دونوں پارٹیاں منتشر ہوکر اپنے اپنے انتخابی دفاتر میں چلیں گئیں مگر پولیس کا یہ کہناتھا کہ منج گروپ کا سلطان پورہ چوک میں بغیر چاردیواری اور مین گیٹ کے ٹینٹ لگا کر بنایاجانے والا انتخابی دفتر غیر قانونی ہے جسے پولیس نے پوری فورس کے ہمراہ اکھاڑنے کی کوشش بھی کی مگروہاں پر موجود منج گروپ کے حمایتوں ارشد منج کی قیادت میں وہاں سے اٹھنے سے انکار کردیا۔

انکا کہناتھا کہ جہاں پر ہم بیٹھے ہیں یہ ہماری رجسٹری شدہ جگہ ہے ہم اپنا دفتر یہاں سے ہرگز نہیں ہٹائیں گے ،بعدازں پولیس افسران پی ٹی آئی قیادت کے ساتھ مذاکرات کے بعد پی ٹی آئی کے سرکردہ افراد نے پولیس کو یقین دہانی کروائی 24گھنٹے کے اندر ہم چاردیواری مکمل کرکے گیٹ لگا لینگے جس پر معاملہ رفع دفع ہوگیا دریں اثناء پاکستان مسلم لیگ(ن) کے اس حلقہ سے نامزد امیدوار سابق وائس چیئرمین ضلع کونسل میاں امجد لطیف نے میڈیا کو بتایا کہ لڑائی جھگڑے اور غنڈہ گردی کی (ن) لیگ نے کبھی بھی سیاست کی ہے اور نہ ہی آئندہ کرینگے میرے مقابلہ میں شیخوپورہ کے منج گروپ کے امیدوار اور انکے حامی آئے روز چھیڑ خانی کرتے ہیں جو جھگڑے کا باعث بنتی ہیں مگر ہم پر امن ماحول رکھنے کی خاطر آخری دم تک برداشت کا دامن ہاتھ سے نہیں چھوڑیں گے،ہماری محکمہ پولیس اور قانون نافذ کرنے والے اداروں سے بھی یہی درخواست ہے کہ وہ کسی بھی پریشر کو بالائے طاق رکھتے ہوئے قانون کے مطابق کاروائی کریں چاہے زیادتی کرنے والا شخص پی ٹی آئی کا ہویا(ن) لیگ کا دونوں کے لیے قانون برابر ہونا چاہیے۔

مزید :

علاقائی -