کینیڈا کی پارلیمنٹ میں پنجابی کو تیسری زبان قراردیا گیا ہے،فخر زمان

کینیڈا کی پارلیمنٹ میں پنجابی کو تیسری زبان قراردیا گیا ہے،فخر زمان

  

لاہور (پ ر) کینیڈا میں انگریزی اور فرانسیسی کے بعد پارلیمنٹ میں پنجابی کو تیسری زبان قرار دیا گیا ہے اس سے قبل کینیڈا میں پنجابی کی حیثیت ویسے ہی برقرار ہے۔ امریکہ کی مغربی ریاست کیلیفورنیا میں کینیڈین شہر وینکور سے لے کر بحرالکاہل کے کنارے لاس اینجلس تک سب آباد کار پنجابی بولتے ہیں اور یونیورسٹیوں میں پنجابی کے شعبے موجود ہیں۔ انگلینڈ، ڈنمارک، فرانس، جرمنی، آسٹریا، ہالینڈ، ملائیشیا، سنگا پور، ہانگ کانگ، تھائی لینڈ، ماریشس میں پنجابی کروڑوں افراد کی زبان ہے اور تعلیمی اداروں میں اس زبان کے لئے سہولتیں مہیا کی گئی ہیں۔ ان خیالات کا اظہار عالمی پنجابی کانگریس کے چیئرمین فخر زمان نے ادیبوں، سکالروں اور صحافیوں کے ایک نمائندہ گروپ سے کیا۔ انہوں نے کہا ہمارے پنجاب کے سیاست دانوں، بیورو کریسی اور مغرور اشرافیہ کے لئے یہ بات شرمناک ہے کہ یہاں نہ تو پنجابی میں گفتگو کی جاتی ہے اور نہ ہی اس کو کوئی قابل احترام مقام دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یونیسکو کے اعداد وشمار کے مطابق پنجابی دُنیا کی دسویں بڑی زبان ہے۔ فخر زمان نے کہا کہ دو سندھی، دو پشتون، دو بلوچی خواہ کتنے اعلیٰ تعلیم یافتہ یا بالکل اَن پڑھ ہوں وہ اپنی مادری زبان میں بات کریں گے، لیکن پنجابی احساس کمتری میں مبتلا ہیں اور ہر سطح پر پنجابی دشمنی نمایاں ہے وہ غلط سلط انگریزی اور پنجابی نما اُردومیں ہی بات کریں گے۔ فخر زمان نے کہا کہ سابق وزیراعلیٰ چودھری پرویز الٰہی نے صوبائی اسمبلی میں پنجابی میں تقریر پرپابندی اُٹھا دی تھی اور میرے کہنے پر پلیک قائم کیا تھا اسی طرح وزیراعلیٰ مشرقی پنجاب امریندر سندھ نے میری خواہش کے مطابق پٹیالہ میں ورلڈ پنجابی سنٹر بنایا تھا آج اُس پنجاب میں پنجابی بی اے تک لازمی ہے۔ دلی ریاست میں تیسری سرکاری زبان ہے اور ہریانہ ریاست میں دوسری سرکاری زبان ہے۔ ڈبلیو پی سی کے چیئرمین نے پھر اپنے مطالبات دہرائے کہ پنجابی کو پرائمری کی سطح پر لاگو کیا جائے، لاہور میں پنجابی یونیورسٹی قائم کی جائے اور کالج سے لے کر ایم اے تک سارا نصاب فی الفور تبدیل کیا جائے یہ انتہائی قابل مذمت ہے کہ پنجاب کے وزیراعلیٰ ہمارے مطالبات کو کوئی اہمیت نہیں دیتے۔ انہیں پنجاب کی تاریخ، کلچر، صوفی ورثہ، پنجابی زبان سے کوئی سروکار نہیں اور نہ ہی یہ ان کی کمرشل ترجیحات میں شامل ہیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -