نیشنل ایکشن پلان کے مثبت نتائج سامنے آگئے ،جرائم کی شرح میں نمایاں کمی

نیشنل ایکشن پلان کے مثبت نتائج سامنے آگئے ،جرائم کی شرح میں نمایاں کمی

  

 لاہو ر(کر ائم سیل)نیشنل ایکشن پلان کے تحت پنجاب پولیس کی دہشت گردوں اور جرائم پیشہ افراد کے خلاف جاری کاروائیوں کے مثبت نتائج برآمد ہو رہے ہیں اور جس کے نتیجے میں نہ صرف جرائم کا گراف نیچے آیا ہے بلکہ دہشت گردی میں بھی واضح کمی واقع ہوئی ہے۔ جس کا ثبوت عید الضحی، محرم الحرام اور بلدیاتی الیکشن کے دوران امن و امان کی بحالی شامل ہیں۔اس سلسلے میں صرف نیشنل ایکشن پلان کے تحت گزشتہ10ماہ کے دوران صوبے بھر میں 33ہزار 7سو 72سرچ آپریشنز کیے گئے ۔ جس کے دوران 9لاکھ 94ہزار1سو 18لوگوں سے پوچھ گچھ کی گئی جبکہ 5ہزار 5سو 49اور Foreign Actکی خلاف ورزی پر 980افرادکیخلاف مقدمات درج کیے گئے۔اس عرصے کے دوران 6ہزار 1سو 62جنرل ہولڈ اپ کیے گئے جن میں 24ہزار 4سو 36مشکوک افراد کو گرفتار کیا گیا جبکہ بغیر نمبر پلیٹ ، غیر مجاز سبز نمبر پلیٹ اور کالے شیشے والی 1لاکھ 22ہزار 8سو گاڑیوں کو بند کیا گیا۔ اسی طرح اسلحے کی نمائش کرنے پر 2ہزار 8سو 51مقدمات درج کیے گئے اور ناجائز اسلحہ رکھنے پر 2ہزار 6سو 11مقدمات درج کر کے 189ہتھیار قبضے میں لے لیے گئے۔اسی عرصے کے دوران 40خطرناک دہشت گردوں کو گرفتار جبکہ 69کو زیر حراست رکھا گیا ہے۔نیشنل ایکشن پلان کے تحت کرائے داری ایکٹ کی خلاف ورزی پر 7ہزار 3سو 28مقدمات درج کیے گئے جبکہ 11ہزار 36افراد کو گرفتار کیا گیااور 1ہزار7سو 54کو سزائیں ہوئیں۔ اسی طرح منافرت آمیز میٹریل چھاپنے پر 5سو47مقدمات درج کیے گئے، 5سو80افراد کو گرفتار جبکہ 35افراد کو سزائیں سنائی گئیں۔

مزید :

علاقائی -