متحدہ نے عمران خان کے خلاف نااہلی کیس واپس لے لیا

متحدہ نے عمران خان کے خلاف نااہلی کیس واپس لے لیا
متحدہ نے عمران خان کے خلاف نااہلی کیس واپس لے لیا

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) متحدہ قومی موومنٹ نے عمران خان کے خلاف الیکشن کمیشن میں دائر نااہلی کیس واپس لے لیا۔ متحدہ کے رہنما کنور نوید جمیل کی جانب سے کیس واپس لینے کے بعد الیکشن کمیشن نے معاملہ نمٹا دیا۔تفصیلات کے مطابق ایم کیوا یم کی جانب سے الیکشن کمیشن میں دائر درخواست میں موقف اپنایا گیا تھا کہ عمران خان آئین کے آرٹیکل 62 اور 63 پر پورا نہیں اترتے۔ عمران خان کوسیتا وائٹ کے معاملے اور 126 روزکے دھرنے پر نااہل قرار دیا جائے۔گزشتہ سماعت پر چیف الیکشن کمشنر نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا تھا کہ یہ معاملہ حساس اور قانونی نوعیت کا ہے۔ الیکشن کمیشن سیتاوائٹ سے متعلق درخواست پرفیصلہ دے چکا ہے۔ آج ہونے والی سماعت کے موقع پر ایم کیو ایم کے وکیل اے ایس قادری پیش ہوئے اور کیس واپس لینے کی درخواست کی جس پر ممبر الیکشن کمیشن ریاض کیانی کی سربراہی میں چار رکنی بینچ نے معاملہ نمٹا دیا۔دریں اثنا تحریک انصاف کے ایبٹ آباد سے 21 منحرف کونسلرز کے خلاف پارٹی امیدوار کے خلاف ووٹ دینے کے کیس میں اعتزاز احسن تحریک انصاف کی جانب سے بطور وکیل پیش ہوئے۔ پی ٹی آئی کے وکیل اعتزاز احسن کا کہنا تھا کہ ڈسٹرکٹ کونسل ایبٹ آباد کے ان 21 کونسلرز نے پارٹی پالیسی کی خلاف ورزی کی۔ پارٹی پالیسی کی خلاف ورزی پر انہیں نااہل کیا جائے۔الیکشن کمیشن نے تمام فریقین سے تحریری بیان اور بیان حلفی طلب کرتے ہوئے کیس کی سماعت 8 دسمبر تک ملتوی کر دی۔

مزید :

اسلام آباد -