اگر آپ صبح تھکے ہوئے اُٹھتے ہیں تو رات کو سونے سے پہلے یہ ایک کام کرنا فوری چھوڑدیں، ایک ہی دن میں واضح فرق سامنے آجائے گا

اگر آپ صبح تھکے ہوئے اُٹھتے ہیں تو رات کو سونے سے پہلے یہ ایک کام کرنا فوری ...
اگر آپ صبح تھکے ہوئے اُٹھتے ہیں تو رات کو سونے سے پہلے یہ ایک کام کرنا فوری چھوڑدیں، ایک ہی دن میں واضح فرق سامنے آجائے گا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک)دورحاضر میں موبائل فون لوگوں کی زندگیوں میں اس قدر دخیل ہو چکا ہے کہ ضرورت سے بڑھ کر عادت بن چکا ہے۔ بہت لوگ ایسے ہیں جو صبح اٹھتے ہی سب سے پہلے موبائل فون کی سکرین دیکھتے ہیں اور رات سونے سے پہلے بھی بستر میں پڑے ہوئے کافی دیر تک فون سے چمٹے رہتے ہیں۔ اب ماہرین نے ایسے لوگوں کے لیے وارننگ جاری کر دی ہے۔میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق ماہرین کا کہنا ہے کہ جو لوگ سونے سے قبل کمرے میں روشنی کم کرکے موبائل فون استعمال کرتے ہیں ان کی نیند کا معیار بہت گر جاتا ہے۔ آج کل کے سمارٹ فونز سے خارج ہونے والی نیلی روشنی بڑی تعداد میں لوگوں کو بے خوابی اور نیند کے دیگر مسائل کا شکار کر رہی ہے۔

’نہاتے وقت ٹب میں تھوڑی سی یہ چیز ڈال دیں، دنوں میں چربی پگھل جائے گی‘ ماہرین نے زبردست مشورہ دے دیا

یونیورسٹی آف کیلیفورنیا کے ماہرین نے اپنی اس تحقیق میں سینکڑوں لوگوں کی موبائل فون کی عادات کا جائزہ لیا اور ان سے نیند کے متعلق سوالات کیے۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ زیادہ تر نوجوان موبائل فونز کا طویل استعمال کرتے ہیں اور اسی عمر کے لوگوں نے اپنی نیند میں بگاڑ آنے کی نشاندہی بھی سب سے زیادہ کی ہے۔ سروے میں معلوم ہوا ہے کہ ایک تہائی نوجوان رات کو سونے سے قبل موبائل فون استعمال کرتے ہیں۔ تحقیقاتی ٹیم کے رکن میتھیو کرسٹن کا کہنا تھا کہ موبائل فون کی لت کے باعث نیند کا پورا نہ ہونا لوگوں کی تعلیم اور کام پر اثرانداز ہو رہا ہے اور ڈپریشن سے بھی اس کا گہرا تعلق ثابت ہو چکا ہے۔ نیند کی کمی اور ڈپریشن آگے چل کر ان لوگوں میں موٹاپے کاشکار ہونے اور دل و دماغ کی بیماریوں میں مبتلا ہونے کے امکانات میں بھی اضافہ کر دیتی ہے۔ ان بیماریوں سے بچنے کے لیے لوگوں کو سونے سے قبل موبائل فون استعمال کرنے سے گریز کرنا چاہیے۔

مزید :

تعلیم و صحت -