’جس بھی غیر ملکی مرد میں یہ خصوصیات ہوں ابھی شادی کرنے کیلئے تیار ہوں‘ ٹرمپ کی جیت پر دلبرداشتہ خوبرو امریکی لڑکی نے غیر ملکی مَردوں کو ناقابل یقین پیشکش کردی

’جس بھی غیر ملکی مرد میں یہ خصوصیات ہوں ابھی شادی کرنے کیلئے تیار ہوں‘ ٹرمپ ...
’جس بھی غیر ملکی مرد میں یہ خصوصیات ہوں ابھی شادی کرنے کیلئے تیار ہوں‘ ٹرمپ کی جیت پر دلبرداشتہ خوبرو امریکی لڑکی نے غیر ملکی مَردوں کو ناقابل یقین پیشکش کردی

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک)ڈونلڈ ٹرمپ کے امریکہ کا صدارتی انتخاب جیتنے پر ہزاروں امریکی سڑکوں پر نکلے ہوئے ہیں اور انہیں اپنا صدر ماننے سے انکار کر رہے ہیں۔ ریاست کیلیفورنیا کے عوام ٹرمپ کی جیت پر سب سے زیادہ افسردہ ہیں جہاں ریاست کی امریکی یونین سے علیحدگی کی مہم بھی چل نکلی ہے۔ کیلیفورنیا ہی کی ایک لڑکی نے ”ٹرمپ کے امریکہ“ سے فرار کا انتہائی منفرد راستہ اختیار کر لیا ہے۔ وینڈلین نامی اس لڑکی نے غیر ملکی مردوں کو شادی کی پیشکش کر دی ہے تاکہ وہ بیاہ کر سکاٹ لینڈ چلی جائے، کیونکہ وہ ڈونلڈ ٹرمپ کے امریکہ میں نہیں رہنا چاہتی۔ برطانوی اخبار ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق وینڈلین نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ریڈٹ پرلکھا ہے کہ ”میری عمر 35سال ہے اور میں ایک خوش مزاج لڑکی ہوں۔ مجھے کسی ایسے مرد کی تلاش ہے جسے سکرٹس اور خواتین رہنماﺅں پر کوئی اعتراض نہ ہو۔ میں اپنا سامان پیک کر رہی ہوں اور 2گھنٹے میں باہر کی پرواز پر سوار ہو سکتی ہوں۔“

دنیا کا شرمناک ترین میلہ چین میں سج گیا، ایسی چیزیں سیل پر لگادی گئیں کہ دیکھ کر شیطان بھی شرماجائے

ویب سائٹ ریڈٹ پر وینڈلین نے مزید لکھا ہے کہ ”میرا خاندان1943ءمیں آئرلینڈ سے امریکہ منتقل ہوا تھا، اس وقت وہاں کیتھولک فرقے کے عیسائی ہمارے فرقے کے لوگوں کو آگ لگا کر زندہ جلا رہے تھے۔ میں اب آئرلینڈواپس نہیں جانا چاہتی اور یہاں بھی ڈونلڈ ٹرمپ جیت چکا ہے۔ لہٰذا میں کسی اور ملک کے کسی شخص سے شادی کرکے وہاں جانا چاہتی ہوں۔ میں کھانا نہیں بناتی لیکن بیکنگ اچھی کر لیتی ہوں۔اس کے علاوہ میں بہت زیادہ وقت ریڈٹ پر گزارتی ہوں۔میں ”میل آرڈر برائیڈ“ بننے کے لیے تیار ہوں۔ کوئی مرد مجھ سے شادی کرنا چاہے تو رابطہ کر سکتا ہے۔“وینڈ لین کا یہ ویڈیو پیغام پوسٹ ہوتے ہیں اسے بے شمار آفرز موصول ہونے لگیں، تاہم یہ معلوم نہیں ہو سکا کہ اس کی مراد پوری ہو گئی یا نہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -