چوکیدار نے ہسپتال کی حاملہ ایل ایچ وی کو تشدد کو نشانہ بناتے ہوئے زخمی کردیا

چوکیدار نے ہسپتال کی حاملہ ایل ایچ وی کو تشدد کو نشانہ بناتے ہوئے زخمی کردیا

  

پشاور(کرائمز رپورٹر)پشاورکے نواحی علاقہ متھرا میں بنیادی مرکز صحت کے چوکیدار نے ہسپتال کی جوانسالہ حاملہ ایل ایچ وی کو تشدد کو نشانہ بناتے ہوئے زخمی کردیا جبکہ اسے بے آبرو کرتے ہوئے کپڑے بھی پھاڑ دیے تفصیلات کے مطابق تیرائی پایان کی رہائشی مسماۃ سکندریہ زوجہ ہاشم خان نے پولیس کو بتایا کہ وہ تیرائی پایان کے مرکزی صحت ہسپتال میں بطور ایل ایچ وی ڈیوٹی کرتی ہوں گزشتہ روز ہسپتال میں موجود تھی اس دوران ہسپتال کا چوکیدار اشفاق ولد سلمان اسے گھورنے لگا جب اسے منع کیا تو اس نے مجھے گالیاں دینا شروع کردی اورلکڑی کے وار سے تشدد کا نشانہ بناتے ہوئے زخمی کردیا اوراس کے کپڑے پھاڑ کر اسے بے آبرو کردیا مدعیہ نے بتایا کہ وہ حاملہ ہے اورملزم کے تشدد سے اس کی حالت غیر ہوگئی ہے پولیس نے مدعیہ کی رپورٹ پر چوکیدار کے خلاف مقدمات درج کرکے تفتیش شروع کردی ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -