درگاہ شاہ نورانی کو منگھو پیر اور حب چوکی کے راستے لگتے ہیں: ایس ایس پی لسبیلہ

درگاہ شاہ نورانی کو منگھو پیر اور حب چوکی کے راستے لگتے ہیں: ایس ایس پی لسبیلہ
درگاہ شاہ نورانی کو منگھو پیر اور حب چوکی کے راستے لگتے ہیں: ایس ایس پی لسبیلہ

  

حب (مانیٹرنگ ڈیسک) ایس ایس پی لسبیلہ جعفر خان نے کہا ہے کہ درگاہ شاہ نورانی پر ہونے والے دھماکے کے بعد پولیس اور لیویز اہلکار جائے حادثہ پر پہنچ چکے ہیں جبکہ کراچی اور دیگر جگہوں سے ایمبولینسز روانہ ہوچکی ہیں جو منگھوپیر اور حب چوکی کے راستے سے آئیں گی۔

نجی ٹی وی سما سے گفتگو کرتے ہوئے ایس ایس پی لسبیلہ جعفر خان کا کہنا تھا کہ درگاہ شاہ نورانی ضلع خضدار کے علاقے میں واقع ہے ۔ دھماکہ عصر اور مغرب کے درمیانی وقت میں ہوا ہے جبکہ ویک اینڈ ہونے کی وجہ سے بڑی تعداد میں لوگ درگاہ پر آئے ہوئے تھے۔

بلوچستان میں درگاہ شاہ نورانی پر دھماکہ،30 افراد جاں بحق ، 100 سے زائد زخمی

انہوں نے بتایا کہ ابتدائی طور پر دھماکے اور سکیورٹی کی صورتحال کے بارے میں کچھ نہیں بتایا جاسکتا تاہم ہمیں یقین ہے کہ وہاں روٹین کی سکیورٹی موجود ہوگی۔ درگاہ دور دراز پہاڑی علاقے میں واقع ہے جہاں منگھوپیر اور حب چوکی سے 2 راستے جاتے ہیں جہاں سے ایمبولینسز گزر کر جائے حادثہ پر پہنچیں گی ۔ پولیس اور لیویز اہلکار موقع پر پہنچ چکے ہیں جو زخمیوں کو ہسپتالوں میں منتقل کر رہے ہیں جبکہ دیگر امدادی ادارے بھی پہنچ جائیں گے۔

مزید :

قومی -