اداروں کی انا ٹکرانے سے جمہوریت تباہ ہو جائے: خواجہ آصف

اداروں کی انا ٹکرانے سے جمہوریت تباہ ہو جائے: خواجہ آصف

سیالکوٹ(بیورو رپورٹ ) وزیر خارجہ خواجہ آصف نے کہا ہے کہ اداروں کی انا ٹکرانے سے جمہوریت تباہ ہوگی، اخباروں کی سرخیوں میں کوئی حقیقت نہیں،خواتین کی شرکت کے بغیر ترقی کی جنگ اکیلے مرد نہیں جیت سکتے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے سیالکوٹ میں گورنمنٹ کالج و ویمن یونیورسٹی میں طالبات میں لیپ ٹاپ تقسیم کرنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب میں چیئرمین ہائیر ایجوکیشن کمیشن اسلام آبادڈاکٹر مختار احمد، چیئرمین ایچ ای سی پنجاب ڈاکٹر نظام الدین، وائس چیئرمین گورنمنٹ کالج وویمن یونیورسٹی ڈاکٹر فرحت سلیمی، چیئرپرسن وزیر اعظم لیپ ٹاپ سکیم لیلیٰ خان،میئر توحید اختر چودھری، چیئرپرسن ضلع کونسل حناء ارشد، اراکین قومی و صوبائی اسمبلی سید افتخار الحسن،شیزا فاطمہ، چودھری محمد اکرام، محسن اشرف، رانا محمد افضل، رانا محمد آصف ، ارشد وڑائچ، ذوالفقار غوری ، گلناز شجاعت ،ایم ایل اے چودھری اسحاق ، ڈپٹی میئر بشیر احمد چودھری ، ایڈمن ڈائریکٹر قمرشہزاد گیلانی اور ہونہار طلبہ رابعہ اشرف کے علاوہ مختلف شعبہ زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد نے کثیر تعداد میں شرکت کی ۔وزیرخارجہ خواجہ آصف نے کہا کہ اداروں کی انائیں جب ٹکرائیں گی تو بچوں اور جمہوریت کا مستقبل تباہ ہوگاجبکہ ٹاک شوز اور اخباروں کی سرخیوں میں کوئی حقیقت نہیں۔وزیرخارجہ نے تعلیم کی ضرورت پرزوردیتے ہوئے کہا کہ علم نے یہودیوں کو ناقابل تسخیر بنایا لہٰذاہمیں بھی ناقابل تسخیر بننے کیلئے علم کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ خواتین کی شرکت کے بغیر ملکی ترقی کی جنگ مرد اکیلے نہیں جیت سکتے۔ خواجہ آصف نے کہا ہے کہ علم سے بڑی کوئی دولت نہیں کیونکہ مال و دولت اور اقتدار چھن جانے والی چیزیں ہیں، وطن عزیز کو ناقابل تسخیر بنانے کیلئے نوجوان نسل کو اپنا ناطہ تعلیم سے جوڑنا ہوگابالخصوص بچیوں کو بھی تعلیم کے میدان میں مساوی مواقع فراہم کرنا ہونگے کیونکہ دورِ جدید کے چیلنجز سے نمٹنے کیلئے خواتین پر مشتمل ملک کی 50فیصد آبادی کو مرکزی دھارے میں لانا ہوگا ۔ انہوں نے کہاکہ سیالکوٹ میں گورنمنٹ کالج وویمن یونیورسٹی اور میڈیکل کالج جیسے اداروں کی وجہ سے منزلوں کے فاصلے سمٹ رہے ہیں ۔انہوں نے کہاکہ جامعہ ہذا کی تعمیر و ترقی کیلئے ہر ممکن وسائل مہیا کئے جائیں گئے اس کیمپس کی توسیع کے علاوہ نیا کیمپس اور ہوسٹلز بھی تعمیر کئے جائیں گے ۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین ہائیر ایجوکیشن کمیشن اسلام آبادڈاکٹر مختار احمدنے کہاکہ پاکستان میں تحقیقاتی تعلیم کا رجحان بڑھ رہا ہے امسال 12ہزار پیپرز نشر کئے گئے ۔ وائس چیئرمین گورنمنٹ کالج وویمن یونیورسٹی ڈاکٹر فرحت سلیمی نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ تعلیم سے اہمیت سے کوئی معاشر ہ انکار نہیں کرسکتا ۔ انہوں نے کہاکہ گورنمنٹ کالج وویمن یونیورسٹی کے قیام کا سہرا خواجہ محمد آصف کے سر جاتا ہے ۔انہوں نے کہاکہ گذشتہ تین برسوں کے دوران ایچ ای ڈی اور ایچ ای سی کے مالی تعاون سے 55ملین روپے کے مشینری و آلات خریدے گئے اور کالج میں12ملین کی لاگت سے کتابیں اور تازہ تحقیقاتی جریدوں کا اضافہ کیا گیا ۔

مزید : صفحہ آخر