تمام پارٹی ونگز متحرک کرنے کا فیصلہ ،حدیبیہ پیپز کیس دوبارہ کھولنا نا انصافی قرار

تمام پارٹی ونگز متحرک کرنے کا فیصلہ ،حدیبیہ پیپز کیس دوبارہ کھولنا نا ...

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک،نمائندہ خصوصی،آئی این پی) مسلم لیگ (ن) کے صدر میاں نوازشریف کی زیر صدارت پارٹی کا اہم اجلاس رائیونڈ میں ہوا۔ذرائع کے مطابق جاتی امرا میں ہونیوالے اجلاس میں شہبازشریف، سپیکر قومی اسمبلی ایاز صادق، پرویز رشید اور خواجہ سعد رفیق ،وزیر داخلہ احسن اقبال سمیت اہم رہنما شریک ہوئے ۔ اس سے قبل نوازشریف اور شہبازشریف کے درمیان جاتی امرا میں 2 گھنٹے طویل ملاقات ہوئی جس میں ملک کی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔سیاسی رہنماؤں کے مشاورتی اجلاس میں پاکستان کی سیاسی صورتحال ،نیب مقدمات اور عدالتوں میں پیشی سمیت دیگر ایشوز کے حوالے سے طویل مشاورت اور آئندہ کی حکمت عملی طے کی گئی جبکہ سپیکر نے میاں نوازشر یف کو نئی حلقہ بندیوں کے معاملے پر قانون سازی سمیت دیگر معاملات پر پار لیمنٹ جماعتوں سے ہونیوالی بات چیت کے حوالے سے بھی آگا ہ کر دیا ہے ۔اجلاس میں پاکستان مسلم لیگ (ن)نے عدالتی فیصلوں کے نتیجے میں ختم شدہ حدیبیہ پیپر مل کیس دوبارہ کھولنا نا انصافی قراردیدیا ۔وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے عدالتی فیصلوں کے نتیجے میں ختم شدہ حدیبیہ پیپر مل کیس دوبارہ کھولنا نا انصافی ہے‘ قومی سیاست کا فیصلہ ایوانوں میں نہیں گلیو ں بازاروں میں ہی ہو گا،پی ایس پی اور ایم کیو ایم کا ملاپ انجینئرڈ ہے جو 24گھنٹوں میں ناکام ہوا ‘مقدمات کے ذریعے مسلم لیگی قیادت کوجکڑنے اور بدنام کرنے کے منصوبے بھی ناکام رہیں گے۔خواجہ سعد رفیق نے مزید کہا کہ پرویز مشرف کو متبادل لیڈر کے طور پر سامنے لانے کی کوشش بری طرح ناکام ہو گی ،سیاسی جماعتیں بنانے اور توڑنے کا مشغلہ ترک کرنا ہو گا۔اجلاس میں نوازشر یف نے کہا کہ عام انتخابات میں کسی صورت تاخیر نہیں ہو نی چاہیے بلکہ بر وقت انتخابات ہی جمہو ریت کی مضبوطی ہے اور عوام اپنے ووٹ کی طاقت استعمال کر یں گے اور (ن) لیگ اور قوم ایک دوسرے کے ساتھ کھڑے ہیں انکو کوئی الگ نہیں کر سکتا ۔ سابق وزیراعظم نواز شریف نے نیب ریفرنسز میں لگائے گئے الزامات کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ میرے خلاف ہونے والی تحقیقات قواعد کے خلاف اور سیاسی مقاصد کے لیے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ آئین کا آرٹیکل 10اے ہر شہری کو فیئر ٹرائل کا حق دیتا ہے ،عدالتی حکم نامے کی روشنی میں دائر عبوری ریفرنسز میں فیئر ٹرائل کا حق نہیں دیا جا رہا۔سپریم کورٹ کے 7نومبر کے فیصلے میں سخت آبزرویشن دی گئی ،مانیٹرنگ جج کی تعیناتی سے آئینی حقوق متاثر ہورہے ہیں۔نواز شریف نے مزید کہا کہ اپنے خلاف دائر ریفرنسز میں الزامات کا دفاع کروں گا۔سردارایاز صادق کا کہنا تھا کہ حلقہ بندیوں پر حلیف جماعتوں کے ساتھ بھی گفتگو جاری ہے اور پوری کوشش ہے کہ جو جمہوریت کے لیئے بہتر ہو وہ فیصلہ لیا جائے۔ اسی حوالے سے جمعیت علماء اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کو بھی اسی حوالے سے دوسرے مذہبی جماعتوں کے ساتھ رابطہ کرنے کے لئے خصوصی ٹاسک دینے پر بھی مشاورت کرنے کا فیصلہ ہوا۔ اسی حوالے سے پارٹی قیادت نے تمام ویگز اور ذیلی ونگز کو فوری طور پر متحرک کرنے کے ساتھ ساتھ پرانے ناراض کارکنوں سے بھی رابطہ کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے تمام صوبائی رہنماوں کو ہدایت جاری کر دی جائیں گی۔ قیادت نے اس بات کا بھی فیصلہ کیا کہ پارٹی ونگز میں جس جگہ عہدے خالی ہیں انہیں بھی مقامی تنظیم کے ساتھ مشاورت کر کے پر کیا جائے۔ اجلاس میں نیب کیسس، حدیبیہ پیپر ملز کیس، اور موجود ملکی سیاسی صورت حال پر تبادلہ خیال کیا گیا،، جبکہ ملک بھر میں شروع کئے جانے والے نواز شریف کی جانب سے جلسوں سے متعلق بھی مختلف امور پر مشاورت کی گئی،، ذرائع کے مطابق نواز شریف ایبٹ آباد، شیخوپورہ اور ملتان کے بعد کراچی میں جلسہ کریں گے۔

مزید : کراچی صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...