کراچی،ایکسپو پاکستان کے دوسرے روز زیادہ تر اسٹالرز خالی پڑے رہے

کراچی،ایکسپو پاکستان کے دوسرے روز زیادہ تر اسٹالرز خالی پڑے رہے

کراچی (اکنامک رپورٹر) ایکسپو پاکستان کے دوسرے دن انتہائی کم تعداد میں لوگوں نے نمائش کا رخ کیا۔زیادہ تر اسٹالز خالی پڑے رہے ۔موبائل فون سروس بندش کے سبب نمائش میں شریک افراد نے رابطے کے لیے محدود پیمانے پر سوشل میڈیا کا سہارا لیا ۔تفصیلات کے مطابق ایکسپو پاکستان 2017کے دوسرے روز چہلم امام حسینؓ کے موقع پر سکیورٹی خدشات کے پیش نظر موبائل فون سروس رات 10بجے تک بند رہی جس کی وجہ سے نمائش میں شریک غیر ملکی مندوبین اور مقامی افراد کو ایک دوسرے سے رابطے میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑا جس کی وجہ سے لوگوں کی بہت کم تعداد نمائش میں شریک ہوئی ۔پاکستان کے دیگر شہروں سے نمائش میں شریک مختلف کمپنیوں اور شعبوں سے تعلق رکھنے والے اسٹال ہولڈرز بھی اس صوت حال سے دلبرداشتہ رہے ۔انہوں نے روزنامہ پاکستان سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ٹی ڈیپ کے منصوبہ سازوں کو اتنی بڑی نمائش کا انعقاد سوچ سمجھ کر کرنا چاہیے تھا ۔انہوں نے مزید کہا کہ ہم اتنی دور سے اس امید پر آئے ہیں کہ ہمیں غیر ملکی خریداروں سے کاروبار کا موقع ملے گا لیکن نتائج اس کے برعکس حاصل ہوئے ہیں اس کی وجہ سے منصوبہ سازوں کی عدم دلچسپی اور معاملہ فہمی کی کمی ہے ۔ضرورت اس امر کی ہے کہ تجارت کے فروغ کے لیے ٹھوس بنیادوں پر منصوبہ بندی کی جائے اور اس پر کسی بھی حال میں عملدرآمد کرایا جائے ۔ایکسپو پاکستان 2017کا ایک دن تو تقریباً ضائع ہوچکا ہے ۔اب دیکھنا یہ ہے کہ نمائش میں شریک 775غیر ملکی خریدار پاکستان کے ساتھ کتنے جوائنٹ وینچر کے معاہدے کرتے ہیں اور بعد ازاں ان معاہدوں پر کسی حد تک عمل درآمد کیا جائے گا ۔نمائش کے دوسرے روز موبائل فون سروس بندش کے سبب نمائش میں شریک افراد نے رابطے کے لیے محدود پیمانے پر سوشل میڈیا کا سہارا لیا ۔

مزید : کراچی صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...