وزارت داخلہ کا آٹومیٹک (خودکار) ہتھیاروں کے لائسنسوں کو معطل کرنے کا فیصلہ

وزارت داخلہ کا آٹومیٹک (خودکار) ہتھیاروں کے لائسنسوں کو معطل کرنے کا فیصلہ
وزارت داخلہ کا آٹومیٹک (خودکار) ہتھیاروں کے لائسنسوں کو معطل کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وزارت داخلہ کی جانب سے آٹومیٹک (خودکار) ہتھیاروں کے لائسنسوں کو معطل کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:حکومت سے اختلافات پر بنگلہ دیش کے چیف جسٹس نے استعفیٰ دے دیا

نجی ٹی وی  کے مطابق وفاقی وزارت داخلہ کی جانب سے جاری کردہ تمام آٹومیٹک اسلحے کے لائسنس معطل کردیے جائیں گے، اس حوالے سے اسلحہ لائسنس ہولڈرز کو 2 اختیارات دیے جائیں گے، پہلے آپشن کے تحت آٹومیٹک لائسنس کو سیمی آٹومیٹک (نیم خودکار) میں تبدیل کروایا جاسکے گا، جس کیلیے 15 جنوری 2018ء تک متعلقہ ڈی پی او آفس سے تصدیق کروانا ہوگی، دوسرے آپشن کے تحت لائسنس ہولڈرز اپنا آٹومیٹک اسلحہ واپس کرسکتے ہیں جس کے عوض حکومت انہیں 50 ہزار روپے دے گی۔ ذرائع کے مطابق اسلحہ کی قیمت چاہے زیادہ بھی ہو تاہم رقم صرف 50 ہزار ہی ملے گی۔ اسلحہ لائسنس یافتہ افراد ڈپٹی کمشنرز اور پولیٹیکل ایجنٹس کے دفاتر میں اپنا اسلحہ واپس کرسکتے ہیں۔

مزید : قومی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...