لودھراں پولیس نے کاروائی کرتے ہوئے وحشیانہ تشدد کر کے 15 سالہ طالب علم کی ٹانگ توڑنے والے استاد کو گرفتار کر لیا ہے

لودھراں پولیس نے کاروائی کرتے ہوئے وحشیانہ تشدد کر کے 15 سالہ طالب علم کی ٹانگ ...

لودھراں ( ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان میں آئے روز اساتذہ کی طرف سے خادم اعلیٰ کے ’’ مار نہیں پیار ‘‘ کے نعرے کی دھجیاں اڑا تے ہوئے بچوں پر وحشیانہ تشدد کے واقعات سامنے آ رہے ہیں، ایسا ہی ایک انسانیت سوز واقعہ لودھراں میں پیش آیا جہاں دو دن پہلے ایک استاد نے محض یونیفارم نہ پہننے کے جرم میں وحشیانہ تشدد کرکے 15 سالہ بچے کی ٹانگ توڑ دی تھی ۔ڈپٹی کمشنر لودھراں نے اس بد ترین واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے ٹیچر کو معطل کر دیا تھا اور پولیس کو مقدمہ درج کر کے ملزم کو فوری طور گرفتار کرنے کی ہدایت جاری کی تھیں، جس پر کاروائی کرتے ہوئے لودھراں پولیس نے آج اصغر نامی استاد کو گرفتار کر لیا ہے، بچے کے والدین نے درندہ نما استاد کو کڑی سے کڑی سزا دینے کا مطالبہ کیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:کراچی میں2 نوجوانوں نے صرف 600 روپے قرض واپس نہ کرنے پراپنے ہی دوست کو پٹرول چھڑک کرآگ لگادی، نوجوان کا جسم بری طرح جھلس گیا

مزید : لودھراں

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...