عراق اور ایران کے سرحدی علاقے میں زلزلے سے 159 افراد ہلاک،سینکڑوں زخمی،متعددعمارتیں منہدم،ہلاکتوں میں اضافہ کا خدشہ

عراق اور ایران کے سرحدی علاقے میں زلزلے سے 159 افراد ہلاک،سینکڑوں ...
عراق اور ایران کے سرحدی علاقے میں زلزلے سے 159 افراد ہلاک،سینکڑوں زخمی،متعددعمارتیں منہدم،ہلاکتوں میں اضافہ کا خدشہ

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

عراق(ڈیلی پاکستان آن لائن)عراق اور ایران کے سرحدی علاقے میں شدید زلزلے سے 159 افراد ہلاک جبکہ سینکڑوں زخمی ہو گئے، تفصیلات کے مطابق رات گئے عراق اور ایران کے سرحدی علاقوں سمیت دبئی ،ترکی، کویت سمیت کئی ملکوں میں بیک وقت زلزلے کے شدید ترین جھٹکے محسوس کئے گئے ہیں ،امریکی جیولوجیکل سروے کے مطابق زلزلے کی شدت 7.2تھی،جبکہ اس کی گہرائی 52کلومیٹر ریکارڈکی گئی۔

ایرانی میڈیاکے مطابق زلزلے سے ایران میں130افرادہلاک جبکہ ایک ہزار سے زائد زخمی ہو گئے ،زلزلے سے 8 گاﺅں کو شدیدنقصان پہنچا ہے اور سینکڑوں عمارتیں گر گئیں اس کے علاوہ شہر میں بجلی کا نظام مکمل طور پر منقطع ہو گیا،زلزلے کے جھٹکے ترکی،متحدہ عرب امارات،کویت میں بھی جھٹکے محسوس کئے گئے ،ان ممالک میں زلزلے گہرائی 34 کلومیٹرریکارڈکی گئی،جبکہ عراقی شہرسلیمانیہ میں زلزلے سے ہلاک افرادکی تعداد30ہوگئی،امریکی جیولوجیکل سروے کے مطابق کوسٹاریکامیں زلزلہ،شدت6.7ریکارڈکی گئی۔

صنعتی اقوام کو ماحولیاتی تبدیلیوں کے انسداد کے لیے زیادہ اقدامات کی ضرورت ہے :انجیلا میرکل

زلزلے کے جھٹکے ترکی ،اسرائیل،کویت اور متحدہ عرب امارات میں بھی محسوس کئے گئے ہیں جس سے ہر طرف خوف کی کیفیت پیدا ہو گئی ہے ۔

مزید : بین الاقوامی