پاور کمپنیوں کی پھرتیاں ، 21پرائیویٹ گرڈسٹیشنوں کو مفت بجلی سپلائی کرنیکا انکشاف

پاور کمپنیوں کی پھرتیاں ، 21پرائیویٹ گرڈسٹیشنوں کو مفت بجلی سپلائی کرنیکا ...

ملتان ( سٹاف رپورٹر) بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں ( ڈسکوز) کی جانب سے نیپر ا کی ہدایات کے برعکس 21 نجی گرڈ سٹیشنوں کو بجلی سپلائی کرنے اوربجلی کے واجبات کی مد میں قومی خزانے کو 3ارب روپے سے زائد نقصان پہنچائے جانے کا انکشاف ہوا ہے ۔ذرائع کے مطابق ڈسکوز حکام کی جانب سے نیپرا ہدایات کو نظر انداز کرتے ہوئے 19 صنعتی اور 2نجی ہاؤسنگ سوسائٹیو ں کے گرڈ سٹیشنو ں کو ایک سال کے لئے5ہزار کلو واٹ سے زائد بجلی کی ترسیل کی گئی تاہم (بقیہ 52نمبرصفحہ7پر )

فراہم کر دہ بجلی کے نرخ کی مد میں واجب الادا رقم وصول کرکے قومی خزانے میں جمع نہیں کرا ئی گئی ۔بجلی کی تقسیم کار کمپنی ملتان الیکٹرک پاور کمپنی ( میپکو ) کے حکام کی جانب سے 8نجی گرڈ اسٹیشنوں کو 2ارب 25کروڑ روپے سے زائد مالیت کی بجلی کی ترسیل کی گئی تاہم فراہم کر دہ بجلی کی قیمت وصول کرکے رقم قومی خزانے میں جمع کرانا گوارا نہیں کیا۔گجرانوالہ الیکٹرک پاور کمپنی ( گیپکو)کے حکام کی جانب سے 4نجی گرڈ سٹیشنوں کو 16کروڑ69لاکھ روپے سے زائد مالیت کی بجلی استعمال کے لئے فراہم کی گئی تاہم نجی گرڈ اسٹیشن کو نوازتے ہوئے رقم وصول کرکے قومی خزانے میں جمع نہیں کرائی گئی ۔لاہور الیکٹرک سپلائی کمپنی ( لیسکو ) کے حکام کی جانب سے 8نجی گرڈ سٹیشنوں کو ساڑھے41کروڑ روپے سے زائد مالیت کی بجلی کی ترسیل کی گئی تاہم فراہم کردہ بجلی کی قیمت وصول کرکے قومی خزانے میں جمع نہیں کرا ئی گئی ۔اسلام آباد الیکٹرک سپلائی کمپنی ( آئیسکو) کے حکام نے ایک نجی گرڈ سٹیشن کو 8کروڑ71لاکھ روپے سے زائد مالیت کی بجلی فراہم کی لیکن فراہم کردہ بجلی کی قیمت وصول کرکے قومی خزانے میں جمع نہیں کرائی جبکہ نیپرا کی ہدایات کے مطابق5ہزار کلو واٹ بجلی حاصل کرنے والے ہر صارف کے لئے اس کی اپنی اراضی پرعلحدہ گرڈ سٹیشن کا موجود ہونا ‘ ذاتی ٹرانسفارمرز ‘ بجلی کی ترسیل کے لئے عمارت کا قیام‘ سرکٹ بریکرز سمیت دیگر سہولیات کی دستیابی ضروری ہے اور 5ہزار کلو واٹ سے زائد بجلی کی فراہمی پر صنعتی نرخ ( بی فور) کے مطابق قیمت وصول کی جائے گی تاہم بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کی جانب سے نیپرا کی جانب سے جاری کردہ ہدایات کو ردی کی ٹوکری کی نذر کر دیا گیا جس کے سبب قومی خزانے کو اربوں روپے کے واجبات کی ادائیگی نہیں ہو سکی ہے ۔ معاملہ اٹھانے پر متعلقہ حکام کا کہنا ہے کہ بعض گرڈ سٹیشنوں کو فراہم کردہ بجلی کی ترسیل میں کمی کرنے کے علاوہ دیگر کو نوٹسز جاری کر دئیے گئے ہیں۔

پھرتیاں

مزید : ملتان صفحہ آخر