لوک فنکارعاشق حسین جٹ کو مداحوں سے بچھڑے 30سال گزر گئے

لوک فنکارعاشق حسین جٹ کو مداحوں سے بچھڑے 30سال گزر گئے

لاہور(فلم رپورٹر)ماضی کے مقبول ترین لوک فنکارعاشق حسین جٹ کو مداحوں سے بچھڑے تیس سال گزر گئے ہیں لیکن اپنی آواز کے ذریعے وہ آج بھی دلوں میں زندہ ہیں۔ عا شق حسین جٹ کی برسی گزشتہ روز ان کے بیٹے گلوکار عباس جٹ کی رہائش گاہ پر منائی گئی۔عاشق جٹ کا تعلق سرگرگودھا سے تھا انہوں نے کم عمری میں اپنی آواز کے ذریعے ملک بھر میں شہرت حاصل کرلی۔عاشق جٹ نے ’’ مینوں پار لنگھادیا‘‘جیسے کئی مقبول ترین گیت گائے۔انہوں نے ایک فلم ’’حورپنجاب دی‘‘ بھی بنائی جو ان کی موت کے باعث ریلیز نہ ہوسکی۔ عاشق جٹ کے بیٹوں عباس جٹ اور فضل جٹ نے والد کے نقش قدم پر چلتے پنجاب میوزک کو بہت فروغ دیا۔

عاشق جٹ کے بیٹے عباس جٹ نے اس بارے میں گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ان کے گیت آج بھی ماضی کی طرح مقبول ہیں ،میں جہاں بھی پرفارم کرتا ہوں لوگ ان کے گیتوں کی فرمائش کرتے ہیں۔

مزید : کلچر