پنجاب میں سموگ بڑھ گئی ، خیر پور میں حد نگاہ صفر ، شہریوں کو سانس لینے میں دشواری

پنجاب میں سموگ بڑھ گئی ، خیر پور میں حد نگاہ صفر ، شہریوں کو سانس لینے میں ...

لاہو( مانیٹرنگ ڈیسک ، نیوز رپورٹر ،ایجنسیاں) پنجاب کے مختلف شہروں میں اسموگ بڑھنے کے باعث شہریوں کو سانس لینے میں دشواری کا سامنا ہے،جبکہخیرپور میں فضائی سموگ کے بادل چھاگئے،نظام زندگی معطل، حد نگاہ کچھ نظر نہیں آرہا ۔لاہور، ملتان، بہاولپور، راجن پور، خانیوال، جہانیاں، وہاڑی، بورے والا اور میلسی سمیت صوبے کے مختلف شہروں میں اسموگ میں اضافہ ہوگیا اور فضا میں دھند کے باعث شہریوں کو مشکلات درپیش ہیں۔شہریوں کو سانس لینے کے علاوہ آنکھوں میں جلن کی بھی شکایات ہیں جب کہ ٹریفک کی روانی بھی متاثر ہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق لاہور میں حد نگاہ 800 میٹر ریکارڈ کی گئی ہے اور آنے والے دنوں میں اسموگ میں اضافے کا خدشہ ہے۔ لاہور کی فضا میں 80 فیصد اسموگ اور 20 فیصد دھند ہے اور شہر کا کم سے کم درجہ حرارت 13 اور زیادہ سے زیادہ 19 ڈگری سینٹی گریڈ تک رہنے کا امکان ہے۔سموگ کی ایک وجہ بڑھتی ہوئیں فضائی آلودگی بھی ہے جو درختوں کی کمی کی وجہ سے بڑھ گئی ہے یہ صورتحال بارش تک ایسی ہی رہنے کی توقع ہے او ر یہ صورت حاال سانس اور آنکھوں کی بیماری میں مبتلا افراد کے لئے نقصان دہ ہوتی ہے اس لئے خاص احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کی ضرورت ہے۔ محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ لاہور کی فضا میں 80 فیصد اسموگ اور 20 فیصد دھند ہے اور شہر کا کم درجہ حرارت 13 اور زیادہ سے زیادہ 19 ڈگری رہنے کا امکان ہے اور آئندہ 24 گھنٹوں میں موسم خشک رہنے کا امکان ہے۔ علاوہ ازیں خیرپور میں فضائی سموگ کے بادل چھاگئے۔نظام زندگی معطل۔حد نگاہ کچھ نظر نہیں آرہا تھا۔موٹر وے پولیس نے حادثات سے بچاؤ کے لئے لائٹنگ سسٹم جاری رکھا ہوا تھا۔دمہ ،سانس،سینہ۔الرجی۔بچوں کے چیسٹ انفیکشن سمیت دیگر بیماریوں میں مبتلا مریضوں کو تکلیف کا سامنا۔سموگ کے وقت گھروں سے بے مقصد نہ نکلیں۔ماسک کا استعمال رکھیں۔شجر کاری فضائی آلودگی کے خاتمہ کے لئے ضروری ہے ،ڈاکٹروں کی ہدایات ۔ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ شہروں اور دیہاتوں میں درخت نہ ہونے سے فضائی سموگ پیدا ہوتی ہے فضائی سموگ کے خاتمہ کے لئے زیادہ سے زیادہ پودے لگائے جائیں فضلا و گند کچرے کو آگ لگانے ۔کار خانوں ۔اینٹوں کے بھٹوں سے نکلنے والے دھوؤں کی وجہ سے فضائی آلودگی پیدا ہوتی ہے اس لئے ہر ایک شخص کو چاہئیے کہ وہ اپنے گھروں محلوں علاقوں میں زیادہ سے زیادہ درخت اگائیں علاقے کو سرسبز بناکر فضائی آلودگی سے جنم لینے والی بیماریوں اور فضائی آلودگی سے نجات حاصل کرسکتے ہیں۔

سموگ

مزید : صفحہ اول