عثمان بزدار بااختیار وزیر اعلٰی ، اختلافات سے اپوزیشن کو فائدہ ہو گا : رہنما ملکر چلیں : عمران خان

عثمان بزدار بااختیار وزیر اعلٰی ، اختلافات سے اپوزیشن کو فائدہ ہو گا : رہنما ...

لاہور(آن لائن) وزیر اعظم عمران خان نے گورنر پنجاب چودھری سرور کو واضح کر دیا ہے کہ عثمان بزدار بااختیار وزیر اعلیٰ پنجاب ہیں اور ان کی حمایت کو برقرار رکھا جائے ، اختلافات سے اپوزیشن فائدہ اٹھا سکتیں ہیں ،تمام اراکین اختلافات بھلا کر آگے بڑھیں ،تفصیلات کے مطابق ہفتہ کے روز پنجاب اسمبلی کے اسپیکر پرویز الہٰی اور جہانگیر ترین کی ملاقات کی ویڈیو کے معاملے پر وزیر اعظم عمران خان نے فوری نوٹس لیا اور گزشتہ رات عمران خان اور جہانگیر ترین نے گورنر پنجاب چودھری سرور سے ملاقات کی جس میں وزیر اعظم نے گورنر پنجاب کو واضح الفاظ میں کہا کہ صوبائی معاملات کو افہام و تفہیم سے حل کیا جائے اور عثمان بزدار ایک بااختیار وزیر اعلیٰ ہیں اور ان کی مکمل حمایت کی جائے ۔آپس کی چپقلش سے وفاقی اور صوبائی حکومت دونوں کو نقصان ہو سکتا ہے اس لئے کوئی جذباتی فیصلہ کرنے کی بجائے دانشمندی کا مظاہرہ کیا جائے ۔ علاوہ ازیں وزیر اعظم عمران خان نے گورنر پنجاب کو سینیٹ انتخابات کے لئے رابطے تیز کرنے کی بھی ہدایت کی اور اتحادی جماعتوں سمیت اراکین اسمبلی سے بات چیت کرنے کا بھی کہا جبکہ وزیر اعظم کی ہدایت پر اتحاد ی جماعتوں کا اہم اجلاس بھی 14 نومبر کو طلب کیا گیا ہے۔

عمران خان

پشاور(این این آئی)وزیراعظم پاکستان عمران خان سے وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے ملاقات کی ۔ ملاقات میں امن و امان ، طرز حکمرانی ، نئے اضلاع میں بلدیاتی انتخابات کے سلسلے میں پیشرفت ،100 روزہ پلان اور دیگر معاملات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعظم نے صوبائی حکومت کے اقدامات کو سراہا اور کہاکہ ہمارا ایجنڈ اقومی تعمیر و ترقی اور ملک کو بحرانوں سے نکال کر اپنے پاؤں پر کھڑا کرنا ہے ۔ سازشیں ہمارا کچھ نہیں بگاڑ سکتیں ۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ اُن کی حکومت عمران خان کے وژن اور سوچ کے مطابق شفاف حکمرانی اور غریب عوام کی فلاح کیلئے صحیح سمت میں اقدامات کر رہی ہے ۔ خیبرپختونخوا کے اداروں کو صحیح معنوں میں فعال بنانے کیلئے بنیادی نوعیت کے اقدامات اُٹھائے گئے ہیں۔ ہمارا 100 روزہ پلان بھی حقیقی معنوں میں بہتر طرز حکمرانی اور غریب کی فلاح کا آئینہ دار ہو گا۔ آج پاکستان کے وزیراعظم عمران خان سے بنی گالہ میں وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے ملاقات کی ۔ صوبے کی مجموعی صورتحال ، انتظامی اور امن و امان کی صورتحال سمیت 100 روزہ پلان پر پیشرفت کا جائزہ لیا گیا اورآئندہ بلدیاتی انتخابات میں سابق فاٹا کے سات اضلاع کی خیبرپختونخوا میں شمولیت کے نتیجے میں ہونے والی پیشرفت کے اُمور پر گفتگو ہوئی۔وزیراعلیٰ نے بتایا کہ ہم نے میرٹ اور انصاف سمیت لوگوں کے بنیادی مسائل کا تعین کرنے اور صوبے میں وسائل کے بے دریغ اور بے جا استعمال کو روکنے اور بہتر حکمرانی کیلئے بنیادی نوعیت کے اقدامات کئے ہیں۔

مزید : کراچی صفحہ اول