مسلمان نبی کریمؐ کے اسوۂ حسنہ کے مطابق زندگی گزاریں، پیر فیاض الحسن

مسلمان نبی کریمؐ کے اسوۂ حسنہ کے مطابق زندگی گزاریں، پیر فیاض الحسن

راولپنڈی(سٹی رپورٹر) شفاعت مصطفی ؐ کو جب تک تسلیم نہ کیا جائے اُس کا ایمان پورا نہیں ہوتا اور جو نبی کی شفاعت کا انکار کرتے ہیں وہ نبی کی شفاعت کے کبھی بھی حقدار نہیں ہو سکتے ۔ ا ن خیالات کا اظہار سجادہ نشین آستانہ عالیہ محمدیہ قادریہ قلندریہ گلشن آباد شریف پیر سرکار جی نے20ویں سالانہ 12روزہ آل پاکستان جشن عید میلادالنبیؐ کانفرنس بسلسلہ تحفظ ختمِ نبوۃ و ناموس رسالتؐکے پہلے پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔پیرسرکارجی نے کہا کہ حبیب کبریاؐکی عظیم ہستی اپنی ذات و صفات کے اعتبار سے اللہ تبارک تعالیٰ کی طرف سے انسانیت کے لیے بہترین تحفہ ہے، آپ کو اللہ تعالیٰ نے اپنی خاص رحمت سے نوازا، آپؐ کو سب سے اعلیٰ اعزاز یہ دیا کہ آپؐ کے ذکر کو اپنا ذکر قرار دیا اور آپؐکے نام کو اپنے نام کے ساتھ شامل کر لیا۔کانفرنس سے حضرت علامہ مولانا مفتی پیر سید حسین احمد مدنی نے اپنے موضوع ً علم اور اخلاق مصطفیؐ شفاعت اور اختیارات مصطفیؐ ً پر خصوصی خطاب کرتے ہوئے کہا کہ رسول کریمؐ کا اخلاق و محبت،اخوت اور بھائی چارہ کا پیغام ہم سب کے لیے مشعل راہ ہے، نبی کریمؐ کے اسوۂ حسنہ پر عمل پیرا ہو کرہم اپنی دنیاوہ اور اخروی زندگیوں کو سنوار سکتے ہیں، مسلمانوں پر لازم ہے کہ وہ نبی کریمؐکے اسوۂ حسنہ کے مطابق زندگی گزاریں۔مہمانِ خصوصی پیر سید چن پیر بادشاہ قادری رزاقی، پیر فیاض الحسن سروری القادری،، پیر محبوب الحسن شاہ قادری، صاحبزادہ محمد احسان دانش قادری، قاری علی اکبر نعیمی، علامہ بشیر احمد سیالوی، راجہ ازرم حمید سیالوی، علی رضا ارشد، محمد حنیف نوری قادری، قاری محمد سرور الحسنی و دیگر علماء کرام کی کثیر تعداد نے بھی اپنے اپنے خیالات کا اظہار کیا۔اختتامِ محفل پیر سرکار جی نے اسلام کی سربلندی اور پاکستان کی ترقی و استحکام کے لیے خصوصی دعا کی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر