کوہاٹ‘ سبزی و فروٹ منڈی آرھتیان کا احتجاجی مظاہرہ

کوہاٹ‘ سبزی و فروٹ منڈی آرھتیان کا احتجاجی مظاہرہ

کوھاٹ (بیورو رپورٹ) شہباز گل شنواری سبزی وفروٹ منڈی کوھاٹ کے آڑھتیان کا ٹی ایم اے میں احتجاجی مظاہرہ اور دھرنا‘ منڈی کو فوری طورپر این او سی دینے کامطالبہ ‘ تفصیلات کے مطابق شہباز گل شنواری پرائیویٹ سبزی وفروٹ منڈی کے آڑھتیان نے ٹی ایم اے میں احتجاجی مظاہرہ کیا احتجاجی مظاہرین کی قیادت صدر آڑھتیان یوسف خان کررہے تھے مظاہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈ اور بینرز اٹھا رکھے تھے مظاہرین سے یوسف خان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت تبدیلی کے نام پر اقتدار میں آئی ہے جو عوام کو روزگار دینے کی پالیسی پر عمل پیرا ہے مگر تحصیل ناظم کوھاٹ اور ٹی ایم او برسرروزگار دس پندرہ ہزار لوگوں کامعاشی استحصال کرنے کے درپے ہیں اور شہباز گل پرائیویٹ منڈی کو این او سی جاری کرنے میں لیت ولعل سے کام لے رہے ہیں ہم اس معاشی قتل کے خلاف ہیں مگر سرکاری سبزی وفروٹ منڈی کے خلاف ہر گز نہیں ان کاکہنا تھا کہ عدالتی حکم پر ہم نے منڈی میں تمام سہولیات اور شرائط پوری کردی ہیں اگر اسے این او سی مل جائے تو ٹی ایم اے کی ٹیکس آمدن میں بھی اضافہ ہوگا اور مردروں کا رزق روزی بھی چلتی رہے گی انہوں نے کہا کہ تحصیل ناظم کو ہم نے ووٹ دیا مگر اس نے اس ووٹ سے وفا نہیں کی وہ عوام کے نمائندے ہیں عوام کے مفاد میں فیصلہ کریں اور اپنی ذمہ دری نبھائیں ٹی ایم او پر الزام عائد کرتے ہوئے مظاہرین نے کہا کہ وہ ایک کرپٹ انسان ہیں انہیں کوھاٹ سے تبدیل کرکے علاقہ کے لوگوں پر احسان کیاجائے اور شہباز گل منڈی کو کام کرنے کی اجازت دیکر این او سی جاری کیا جائے انہوں نے این او سی کے اجراء تک پرامن احتجاج کا سلسلہ جاری رکھنے کا اعلان کیا بعدازاں انہوں نے تحصیل ناظم کے دفتر کے سامنے دھرنا دیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر