اتوار بازاروں میں مہنگائی، صارفین کی تعداد میں واضح کمی ، متعددخریداری کے بغیر لوٹ گئے

اتوار بازاروں میں مہنگائی، صارفین کی تعداد میں واضح کمی ، متعددخریداری کے ...

لاہور(اپنے نمائندے سے) اتوار بازاروں میں بھی سبزیوں اور پھلوں کی قیمتیں عوام کی پہنچ سے باہر ہونے لگیں۔ عوام کو ریلیف دینے کیلئے لگائے گئے اتوار بازار محض دعوے بن کر رہ گئے۔ وحدت روڈ اتوار بازار میں سبزیوں اور پھلوں کی قیمتیں کنٹرول سے باہر ہو گئیں۔ دکاندار ریٹ لسٹ پر درج قیمتوں سے زائد نرخ وصول کرتے رہے۔خریداروں نے کہا ہے کہ اول کی قیمت پر دوم درجے کی اشیا فروخت کی جا رہی ہیں خریداروں نے شکوہ کیا کہ ناقص اشیا فروخت کی جا رہی ہیں مگر انتظامیہ کوئی ایکشن نہیں لیتی۔گھیا کدو 23، بھنڈی 50، لیموں چائنہ50، چقتدر 50، لال مولی فی گھٹی 12، پودینہ فی گھٹی 6، پیاز 40چقندر50،سبز مرچ 60سلاد فی گھٹی 8، پالک 18، مونگرے 50بینگن 22روپے ٹینڈیاں 35، شلجم 25کریلے 45، مونگرے 50، سبزپیاز پاؤ 40، گاجر 35 روپے ، ٹماٹر اول 30روپے ، پھول گوبھی 20، آلو نیا 37، پیاز اول 21، ٹماٹر 30، ادرک 120، لہسن چائنہ 95، چھوٹا گوشت 750، برائلر گوشت 244، سیب کالا کولو 110انار قندھاری 130، مسمی فی درجن 70، انگور ٹافی 130، انار بدانہ، 260، انگور کافی 120روپے کلو کے حساب سے فروخت ہو رہے تھے۔جب ہم نے وہاں پر موجود لوگوں سے پتہ کیا تو لوگ پھٹ پڑے اور دہائیاں دیتے رہے وہاں پر موجود ثاقب علی جو اپنی فیملی کے ہمراہ آئے انہوں نے بتایا کہ یہ شادمان کا بازار نہیں لوٹ کا بازار ہے۔جو بھی چیزیں لینے اس اتوار بازار میں لینے گئے ہیں وہاں پر سبزیوں اور فروٹ کی قیمتیں آسمان سے باتیں کر رہی ہیں بغیر کچھ خریدے واپس گھر جا رہے ہیں ۔اعظم نے بتایا کہ اتوار بازار میں جو چیزیں فروخت ہو رہی ہیں وہ ہمارے گلی محلوں میں سستے داموں فروخت ہو رہی ہیں یہ کس چیز کا اتوار بازار ہے اتوار بازار تو لوگوں کو ریلیف دیتے ہیں لیکن ہمارے یہ اتوار بازار بجائے ریلیف دینے کے ہمیں ٹینشن دے رہے ہیں۔وہاں پر ایک گھریلو خاتون ریحانہ سے بات کی تھی اس نے بتایا کہ جس ریٹ پر یہ سبزیاں اور پھل دے رہے ہیں ان کا معیار تو بہت خراب ہے وہ ہم نہیں خرید سکتے اس لئے ہم واپس جا رہے ہیں ۔ماڈل ٹاون اور شادمان سمیت شہر کے سستے بازاروں کا براحال ہے، شہریوں نے سستے بازاروں میں اشیائے خوردونوش کی سستی اور معیاری فراہمی کیساتھ سکیورٹی انتظامات کی بہتری کا بھی مطالبہ کیا۔ چیزیں توسستی ملتی نہیں اور معیار بھی انتہائی ناقص ہے۔ چھٹی کے روز شہریوں کی بڑی تعداد نے شاد مان اتوار بازار کا بھی رخ کیا۔ یہاں سبز مصالہ جات کی قیمتوں میں اضافہ ہوا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1