’گھر کی یہ چیز سب سے زیادہ یاد آتی ہے‘ داعش کے کارکن سے شادی کرنے والی برطانوی لڑکی جس کو اب شام میں گرفتار کرلیا، کیا چیز سب سے زیادہ یاد آتی ہے؟ جان کر یقین نہ آئے

’گھر کی یہ چیز سب سے زیادہ یاد آتی ہے‘ داعش کے کارکن سے شادی کرنے والی ...
’گھر کی یہ چیز سب سے زیادہ یاد آتی ہے‘ داعش کے کارکن سے شادی کرنے والی برطانوی لڑکی جس کو اب شام میں گرفتار کرلیا، کیا چیز سب سے زیادہ یاد آتی ہے؟ جان کر یقین نہ آئے

  

دمشق(مانیٹرنگ ڈیسک)مغربی ممالک سے نو عمر لڑکیوں کی بڑی تعداد داعش کی ’خلافت‘ میں عیش و عشرت کی زندگی گزارنے کا خواب لے کر شام گئی تھیں لیکن وہاں ان کے ساتھ ایسا سلوک ہوا کہ نانی یاد آ گئی۔ برطانوی لڑکی ریما اقبال بھی ایک ایسی ہی مثال ہے، جسے شام جانے کے بعد نانی کی یاد تو نجانے ستاتی ہے یا نہیں البتہ اپنے ملک کی لذیذ مچھلی اور کرارے چپس کی یاد ایک پل چین نہیں لینے دیتی۔

برطانوی میڈیا کے مطابق شام کے ایک کیمپ میں محصور اس لڑکی نے ایک حالیہ انٹرویو کے دوران اپنی حکومت سے درخواست کی ہے کہ کسی طرح اسے واپس لایا جائے کیونکہ وہ مچھلی، چپس اور برطانوی محکمہ صحت کی مفت سہولیات کو بہت یاد کرتی ہے۔ مشرقی لندن سے تعلق رکھنے والی ریما نے داعش کے مشہور جنگجو سیلسو راڈری گیز ڈاکوسٹا سے شادی کی اور چار سال قبل شام چلی گئی تھی۔

عراق و شام کے میدان جنگ میں داعش کو شکست ہونے کے بعد اس کی ’خلافت‘ کا بھی شیرازہ بکھر گیا ہے اور ریما بھی دیگر کئی غیر ملکی خواتین کے ساتھ گزشتہ چند ماہ سے شمال مشرقی شام کے ایک کیمپ میں محصور ہے۔ اُس کی بہن زارا بھی خواتین کے لئے قائم کئے گئے کیمپ میں موجود ہے اور وہ دونوں واپس آنا چاہتی ہیں۔

ایک غیر ملکی صحافی نے اس کیمپ کا دورہ کیا تو ریما سے بھی بات چیت کی، جس کے دوران اُس کا کہنا تھا کہ ”مجھے اپنے ملک کی مچھلی اور چپس کی یاد ہر روز یاد آتی ہے۔ مجھے یہ چیزیں سب سے زیادہ پسند تھیں۔ اچھا کھانا اور دوست ہی میری زندگی تھے۔ مجھے دکھ ہے کہ اب میں ان چیزوں سے محروم ہوں۔ میری زندگی بالکل تبدیل ہوکررہ گئی ہے۔ میں ہر صورت واپس جانا چاہتی ہوں۔ یہاں صحت کی سہولیات بھی نہ ہونے کے برابر ہیں۔ میں واپس جاکر مقدمے کا سامنا کرنے کے لئے بھی تیار ہوں لیکن مجھے وہی زندگی واپس چاہیے۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس