معروف مسلمان گلوکار نے اسلام چھوڑنے کا اعلان کردیا، ہنگامہ برپاہوگیا

معروف مسلمان گلوکار نے اسلام چھوڑنے کا اعلان کردیا، ہنگامہ برپاہوگیا
معروف مسلمان گلوکار نے اسلام چھوڑنے کا اعلان کردیا، ہنگامہ برپاہوگیا

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا بھر میں بے شمار مسلم نوجوان معروف برطانوی گلوکار زین ملک کو مسلمان سمجھتے ہوئے اُن سے اظہار محبت کرتے تھے مگر آج یہی نوجوان اُن سے نفرت کا اظہار کر رہے ہیں۔ وجہ اس کی یہ ہے کہ عالمی فیشن جریدے ”ووگ“ کو دئیے گئے ایک انٹرویو میں زین ملک نے واضح الفاظ میں کہہ دیا ہے کہ اسلام سے اُن کا کوئی تعلق واسطہ نہیں۔

اس برطانوی گلوکار کے والد پاکستانی ہیں اور اُن کا نام بھی مسلمانوں والا ہی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ دنیا بھر میں ان کے پرستار انہیں مسلمان ہی سمجھتے رہے ہیں لیکن اب انہوں نے خود کہہ دیا ہے کہ وہ مسلمان نہیں ہیں۔ حالیہ انٹرویو میں ان سے سوال کیا گیا تھا کہ ”کیا آپ خود کو مسلمان کہیں گے؟“ جس کے جواب میں ان کا کہنا تھا ”نہیں، میں ایسا نہیں کہوں گا!“

زین ملک کا مزید کہنا تھا کہ ”مذہبی عقائد انتہائی ذاتی نوعیت کی بات ہوتے ہیں۔ سچی بات یہ ہے کہ میں نے واضح طور پر کبھی نہیں کہا کہ میرے مذہبی نظریات کیا ہیں۔ میں نے مسلم ہونے کا اقرار کبھی نہیں کیا۔ میں روحانی طور پر اس بات پر یقین رکھتا ہوں کہ خدا کا وجود ہے۔ میں ان عقائد کو اپنی ذات تک محدود رکھنا چاہتا ہوں۔ میرا عقیدہ یہ ہے کہ دوسروں کے ساتھ اچھا سلوک کریں تو آپ کے ساتھ بھی اچھا برتاﺅ ہوگا۔“

زین ملک کے اس بیان پر سوشل میڈیا میں شدید تنقید اور افسوس کا سلسلہ جاری ہے۔ عالیہ نامی سوشل میڈیا صارف کا کہنا تھا کہ ”زین ملک نے اسلام چھوڑ دیا؟ مجھے ایسے محسو س ہورہا ہے کہ میرا دل ٹوٹ گیا۔“

ایک صاحب نے لکھا کہ ”اب ہم اس بات پر افسوس کررہے ہیں کہ زین ملک مسلمان نہیں رہے، لیکن ہم جانتے ہیں کہ وہ شراب بھی پیتے تھے، پارٹیوں میں بھی جاتے تھے، اور کبھی بھی انہوں نے اسلامی جذبات کا اظہار نہیں کیا تھا۔“

اسی طرح کے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے ایک اور سوشل میڈیا صارف کا کہنا تھا کہ ”کیا آپ واقعی توقع کررہے تھے زین ملک، جو کہ گلوکار ہیں، جو کہ شراب پیتے ہیں، سگریٹ نوشی کرتے ہیں، قابل اعتراض پارٹیوں میں جاتے ہیں، جسم پر ٹیٹو بنوائے ہوئے ہیں، کہ وہ خود کو مسلمان سمجھتے تھے؟ آپ سب کس بات پر صدمے میں ہیں مجھے سمجھ نہیں آرہی۔“

مزید : تفریح