پنجاب میں 1 کروڑ95 لاکھ ایکڑ پر گندم کاشت کا ہدف مقرر

پنجاب میں 1 کروڑ95 لاکھ ایکڑ پر گندم کاشت کا ہدف مقرر

  



ملتان (سپیشل رپورٹر)امسال صوبہ پنجاب میں 2 لاکھ ایکڑ اضافے سے مجموعی طور پر1 کروڑ95 لاکھ ایکڑ پر گندم کاشت کی جا رہی ہے جس سے پیداوار کا تخمینہ1 کروڑ95 لاکھ ٹن ہے جو پچھلے سال سے20 لاکھ ٹن زائد ہے یہ بات وزیر زراعت پنجاب ملک نعمان احمد لنگڑیال نے رینالہ خورد بمقام چک نمبر5/1RA میں وزیر اعظم زرعی ایمرجنسی پروگرام کے تحت گندم کی فی ایکڑ پیداوار میں اضافہ وگندم کی بوائی 2019-20 کا افتتاح کر تے ہوئے کہی۔تقریب میں سید صمصام بخاری وزیر امور اشتمال اراضی پنجاب (بقیہ نمبر51صفحہ12پر)

،ڈاکٹر انجم علی ڈائریکٹر جنرل زراعت(توسیع)،ڈاکٹر غضنفر علی منیجنگ ڈائریکٹر پنجاب سیڈ کارپوریشن، مدثر عباس ڈائریکٹر نظامت زرعی اطلاعات پنجاب،ہمایوں بشیر تارڑآر پی او ساہیوال،مریم خان ڈپٹی کمشنر اوکاڑہ،اسسٹنٹ ڈائریکٹر زرعی اطلاعات ملتان نوید عصمت کاہلوں سمیت کاشتکاروں کی کثیر تعداد شریک ہوئی۔وزیر زراعت پنجاب ملک نعمان احمد لنگڑیال نے کاشتکاروں کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے بتایا کہ گندم کی فی ایکڑ پیداوار مین اضافہ کیلئے وزیر اعظم زرعی ایمرجنسی پروگرام کے تحت9 ارب روپے سے زائد رقم سے کاشتکاروں کو سبسڈی پر منظور شدہ اقسام کے بیج و زرعی مشینری فراہم کی جا رہی ہے جس سے آنے والے دنوں میں صوبہ میں گندم کی فی ایکڑ اوسط پیداوار میں 7 من فی ایکڑ کا اضافہ ہو گا جس سے صوبہ میں فوڈ سیکیورٹی کو یقینی بنایا جائے گا۔انھوں نے مزید کہا کہ حکومت پنجاب وزیر اعظم پاکستان عمران خان کے ویژن کے مطابق وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بُزدار کی قیادت میں کاشتکاروں کی فلاح کیلئے ہر ممکن اقدام کر رہی ہے جس سے کاشتکاروں کی آمدن اور زرعی فی ایکڑ پیداوار میں اضافہ ہو گا۔سید صمصام بخاری نے کاشتکاروں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آپ کی منتخب حکومت نے وزیر اعظم پاکستان کی ہدایت پر جو زرعی پالیسی ترتیب دی ہے اس کا بنیادی محور کسان اور زراعت ہیں اور آئندہ آنے والے دور میں کاشتکاروں کی خوشحالی یقینی بنانے کیلئے ایسے متعدد اقدامات اور کئے جائیں گے جس سے زرعی برآمدات میں اضافہ ہوگا اور خوشحالی کے ایک نئے دور کا آغاز ہو گا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر