کرتار پور راہداری پاکستان کا بھارت کیساتھ بہتر تعلقات کیلئے اچھا اقدام: چین 

کرتار پور راہداری پاکستان کا بھارت کیساتھ بہتر تعلقات کیلئے اچھا اقدام: چین 

  



بیجنگ(آئی این پی)چین نے کرتار پور راہداری کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا ہے یہ پاکستان کا تعلقات میں بہتری کیلئے اچھا اقدام ہے، پاک بھارت جنوبی ایشیا کے اہم ترین ممالک ہیں،باہمی ہم آہنگی نہ صرف فریقین کے مفاد میں ہے بلکہ دنیا کے مفادات بھی وابستہ ہیں، چین کو امید ہے فریقین اختلافات بہتر طریقے سے نمٹائیں،چین افغان امن کیلئے ہر ممکنہ مدد کی فراہمی کیلئے تیار ہے۔ تفصیلات کے مطابق  چینی وزارت خارجہ کے ترجمان کینگ شوانگ نے پیر کے روز معمول کی پریس بریفنگ میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہایہ بھارت کیساتھ دوستانہ تعلقات کو فروغ دینے کیلئے پاکستان کی طرف سے ایک اچھا اشارہ ہے، گینگ شوانگ نے مزید کہا پاک بھارت دونوں ہی جنوبی ایشیا کے اہم ممالک ہیں، باہمی ہم آہنگی کیساتھ رہنا دونوں ممالک کے بنیادی مفادات میں ہے اور یہ عالمی برادری کی مشترکہ توقع بھی ہے،امید ہے دونوں فریق خیر سگالی کی ترجمانی کرتے، اسی سمت آگے بڑھتے رہیں گے، اختلافات کو مذاکرات سے نپٹا ئیں، تعلقا ت بہتر بنائیں اور مشترکہ طور پر علاقائی امن و استحکام کی حفاظت کریں گے۔بیجنگ میں چین اور افغانستان کی حکومتوں کے درمیان حال ہی میں ہونیوالی داخلی ملاقاتوں سے متعلق سوال کے جواب میں ترجمان نے کہا چین افغان اکثریتی و افغان ملکیت کے وسیع و جامع امن اور مفاہمت کے عمل اور تعمیری بات چیت کی حمایت کرتا ہے جبکہ افغان حکومت، طالبان سمیت افغان جماعتوں کے مابین بات چیت کا پلیٹ فارم مہیا مفاہمتی عمل آگے بڑھانے کیلئے مدد فراہم کررہا ہے۔امریکی وزیر خارجہ پومپیو کا دورہ جرمنی میں چین کی کمیونسٹ پارٹی پر حملہ ذاتی سیاسی مقاصد کیلئے تھا۔چین کی کمیونسٹ پارٹی کی قائدانہ حیثیت چینی خصوصیات کیساتھ سوشلزم کی سب سے ضروری خصوصیت، تاریخ اور لوگوں کا انتخاب ہے۔چینی عوام کواپنے نظریات، نظاموں، ثقافتوں پر پختہ اعتماد اور وہ چینی خصوصیات کیساتھ بلا اشتعال سوشلزم کی راہ پر گامزن ہیں۔کسی کو بھی ہمارے عقائد کو جھنجھوڑنے اور ہماری ترقی کی رفتار کو روکنے کی اجازت ہر گز نہیں دی جائیگی۔

چین 

مزید : صفحہ آخر