بھارت میں کوئی بھی اقلیت کہیں بھی محفوظ نہیں

    بھارت میں کوئی بھی اقلیت کہیں بھی محفوظ نہیں

  



جے یو آئی (ف) کے مرکزی رہنما حافظ حسین احمد نے کہا ہے کہ جے یو آئی کے سر براہ مولانا فضل الرحمن پہلے ہی اس ایشو پر اپنا واضح موقف بیان کر چکے ہیں کہ ہم تو انڈیا کے لئے کرتار پور بارڈر کھول رہے ہیں تو وہ ہماری مساجد کے حوالے سے تعصب پر مبنی فیصلے دے رہا ہے اب حکومت پاکستان کو چاہئے کہ وہ بھارت کی اس حرکت پر عالمی برادری سے کہے کہ وہ بھارت کے خلاف ایکشن لے اور اس بات کا بھی نوٹس لے کہ بھارت میں کوئی بھی اقلیت کہیں بھی محفوظ نہیں ہے۔ایشو آف دی ڈے میں اظہار خیال کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ اس وقت ضرورت اس امر کی ہے کہ عالمی دنیا کے سامنے یکسو ہو کر ایک موقف کے ساتھ بھارت پر عالمی دباؤ بڑھایا جائے اور بھارت کے بارے میں دنیاکو بتایا جائے کہ وہاں پر کوئی بھی اقلیت محفوظ نہیں ہے اور اس کے ساتھ جتنے مرضی امن قائم کرنے کے لئے ہاتھ بڑھائے جائیں مگر وہ اپنے روائتی تعصب کی آگ کو اسی طرح بڑھانے کی پالیسی پر گامزن ہے جس کی ہم مذمت کرتے ہیں۔

حافظ حسین احمد

مزید : صفحہ اول