پشاور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس وقار احمد سیٹھ  کورونا کے باعث انتقال کر گئے

پشاور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس وقار احمد سیٹھ  کورونا کے باعث انتقال کر گئے
پشاور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس وقار احمد سیٹھ  کورونا کے باعث انتقال کر گئے

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن پشاور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس وقار احمد سیٹھ  کورونا کے باعث انتقال کر گئے۔

پشاور ہائیکورٹ کے ترجمان کے مطابق جسٹس وقار احمد سیٹھ گزشتہ کچھ دنوں سے علیل تھے اور اسلام آباد کے کلثوم انٹرنیشنل ہسپتال میں زیر علاج تھے جہاں جمعرات کی شب ان کا انتقال ہوا۔ ان کی نماز جنازہ جمعہ کو  2 بجے شامی روڈ پشاور پر ادا کی جائے گی۔ ترجمان کے مطابق جسٹس وقار سیٹھ گزشتہ 10 روز سے ہسپتال میں زیر علاج تھے۔ انہیں 2011 میں پشاور ہائیکورٹ کا ایڈہاک جج تعینات کیا گیا تھا۔

خیال رہے کہ پشاور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس وقار احمد سیٹھ نے 2 روز قبل ہی اپنی سپریم کورٹ میں تعیناتی کیلئے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کی تھی۔ انہوں نے یہ درخواست جسٹس فیصل عرب کے ریٹائر ہونے کے بعد دائر کی تھی۔اس سے قبل وہ رواں سال جون میں بھی ایک درخواست کے ذریعے لاہور ہائیکورٹ کے 3 ججز کے سپریم کورٹ میں تقرر کو چیلنج کرچکے تھے۔

جسٹس وقار احمد سیٹھ اس خصوصی عدالت کا بھی حصہ تھے جس نے سابق صدر پرویز مشرف کو سنگین غداری کیس میں سزائے موت سنائی تھی۔  خصوصی عدالت کے سربراہ جسٹس وقار سیٹھ نے فیصلے میں قانون نافذ کرنے والے اداروں کو حکم دیا تھا کہ وہ جنرل (ر) پرویز مشرف کو گرفتار کرنے اور سزا پر عملدرآمد کرنے کی ہر ممکن کوشش کریں اور اگر وہ مردہ حالت میں ملیں تو ان کی لاش اسلام آباد کے ڈی چوک لائی جائے جہاں اسے تین دن تک لٹکایا جائے۔

مزید :

Breaking News -اہم خبریں -قومی -