نسیم الرحمن کی نیب کے ہاتھوں گرفتاری سے بچنے کیلئے ہائیکورٹ میں حفاظتی ضمانت کی درخواست

نسیم الرحمن کی نیب کے ہاتھوں گرفتاری سے بچنے کیلئے ہائیکورٹ میں حفاظتی ...

لاہور(نامہ نگار خصوصی )اے این پی کے سابق رکن قومی اسمبلی نسیم الرحمن نے نیب کی طرف سے ممکنہ گرفتاری سے بچنے کے لئے لاہور ہائیکورٹ میں حفاظتی ضمانت کی درخواست دائر کر دی ۔مردان سے تعلق رکھنے والے عوامی نیشنل پارٹی کے سابق ایم این اے نسیم الرحمن نے شرجیل عدنان شیخ ایڈووکیٹ کی وساطت سے دائر درخواست میں موقف اختیار کیا ہے کہ وہ فروری 1997سے لے کر بارہ اکتوبر 1999تک رکن قومی اسمبلی رہے ، نیب نے سال 2000میں سیاسی مخالفین کی ایما ءپر مختلف ریفرنس بنا ئے، درخواست گزار کے مطابق مشرف دور میں نیب کی طرف سے بنائے گئے ناجائز اثاثوں کے82کروڑ کے ریفرنس سے وہ بری ہو چکے ہیں لیکن بریت کے باوجود نیب دیگر ریفرنسوں میں گرفتار کر ناچاہتاہے، درخواست گزار نے مزید موقف اختیار کیا ہے کہ دیگر ریفرنسوں کے خلاف سپریم کورٹ میں دائر درخواستیں دائر ہیںجن میں ابھی حتمی فیصلہ ہونا باقی ہے مگر نیب انہیں گرفتار کرنے کی کوشش کر رہا ہے، درخواست گزار کے مطابق وہ دل کے مرض کے باعث پنجاب کارڈیالوجی میں زیر علاج ہیں جہاں خطرہ ہے کہ نیب انہیں گرفتار کر لے گا، درخواست میں استدعا کی گئی ہے کہ لاہور ہائیکورٹ احتساب عدالت پشاور میں سرنڈر کرنے تک حفاظتی ضمانت منظور کی جائے،لاہور ہائیکورٹ کے مسٹرجسٹس مظاہر علی اکبر نقوی اور مسٹرجسٹس افتخار حسین شاہ پر مشتمل دو رکنی بنچ کل 13اکتوبر کو سابق ایم این کی درخواست پر سماعت کرے گا۔

نسیم الرحمن

مزید : صفحہ آخر