داعش کے اکاﺅنٹ بند کیوں کئے، ٹویٹر کے سربراہ کو جان کے لالے پڑ گئے

داعش کے اکاﺅنٹ بند کیوں کئے، ٹویٹر کے سربراہ کو جان کے لالے پڑ گئے
داعش کے اکاﺅنٹ بند کیوں کئے، ٹویٹر کے سربراہ کو جان کے لالے پڑ گئے

  

سان فرانسسکو (مانیٹرنگ ڈیسک) سوشل میڈیا ویب سائٹ ٹویٹر منفی سرگرمیوں میں ملوث اکاﺅنٹ کو بند کرتی رہتی ہے لیکن حال ہی میں کچھ ایسے اکاﺅنٹ بند کردئے گئے ہیں کہ جن کی وجہ سے ٹویٹر کے سربراہ سمیت کئی اہم ملازمین کی جان خطرے میں پڑ گئی ہے۔ دراصل یہ اکاﺅنٹ عسکریت پسند تنظیم دولت اسلامیہ (آئی ایس) سے تعلق رکھتے تھے جن کے ذریعے وہ اپنی خبریں، پیغامات اور ویڈیوز دنیا میں پھیلارہے تھے۔ کمپنی نے ان اکاﺅنٹس کو شدت پسندی کو فروغ دینے کے الزام کے تحت بند کردیا۔ اب ٹویٹر کے سربراہ ڈک کوسٹولونے نے انکشاف کیا ہے کہ انہیں اور ان کے کئی ساتھیوں کو جان سے مارنے کی دھمکیاں دی جارہی ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ منفی سرگرمیاں اور شدت پسندی کا فروغ ٹویٹر کی پالیسی کے خلاف ہے اور یہی وجہ ہے کہ ان اکاﺅنٹ کو بند کیا گیا لیکن یہ فیصلہ اب ان کی جان کیلئے خطرہ بن گیا ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس