’’حکومتی صفوں میں اسلام دشمن عناصر کی موجودگی لمحہ فکریہ ہے‘‘

’’حکومتی صفوں میں اسلام دشمن عناصر کی موجودگی لمحہ فکریہ ہے‘‘

خان پور (نمائندہ پاکستان)ختم نبوت کے حوالے سے ترمیم غلطی نہیں سازش تھی حکومت اپنی صئفوں سے اسلام اور ملک دشمن کالی بھیڑوں کو نکالے اقتدار کے ایوانوں میں ملکی استحکام و سا لمیت کے دشمن قادیانی لابی کا موجود ہونا لمحہ فکریہ ہے ریاست اور ریاستی اداروں کی طرف سے (بقیہ نمبر26صفحہ12پر )

جارحانہ فضا نہایت تشویشناک ہے انتظامی بنیادو پر جنوبی پنجاب کی سطح پر فوری نیا صوبہ بنایا جائے نام کوئی بھی ہو وسیب کے وسائل فنڈ ز کا لاہور اور اپر پنجاب میں استعمال انتہائی افسوسناک ہے احتساب بلا تفریق اور سخت انداز میں کیا جائے ان خیالات کا اظہار جمعیت علماء اسلام (س) پاکستان کے مرکزی نائب صدر مولانا مفتی حبیب الرحمن درخواستی جمعیت علماء اسلام (ف) پنجاب کے سر پرست علامہ عبدالرؤف ربانی نے جامعہ عبداللہ بن مسعود خانپور میں مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا جے یو آئی (س) کے مرکزی ناظم مفتی محمد اسعد درخواستی ،جے یو آئی (ف) پنجاب کی جنرل کونسل کے رکن رحیم یار خان کے صدر قاری عظیم بخش رحیمی ،صوبائی رہنما قاری کفایت اللہ درخواستی بھی ہمراہ تھے انہوں نے کہاکہ ختم نبوت ہمارے ایمان کا مسئلہ ہے عقیدہ ختم نبوت ہر مومن کے ایمان کی اساس ہے وفاقی وزیر قانون اور اسکے ساتھ دیگر ملوث لوگوں کوبرطرف کر کے ختم نبو ت کے حلف نامہ پر ہونے والی سازش کو بے نقاب کیا جائے حکمران طبقہ آئین کی اسلامی دفعات کی چھیڑ چھاڑ سے باز نہ آیا تو 77جیسی تحریک چلائی جائے گی ۔ اس موقع پر جامعہ عبداللہ بن مسعود کے نائب مہتمم مولانا محمد ارشد درخواستی، ناظم نشرو اشاعت مولانا محمد احمد درخواستی، نائب ناظم مولانا حسین احمد درخواستی ، صاحبزادہ محمد عبداللہ درخواستی اور جام عبدالمجید جاوید بھی موجود تھے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...