ضلع ملتان میں گرلز ہائی ، ہائر سیکنڈری سکولز کی تعداد 150کرنیکا فیصلہ

ضلع ملتان میں گرلز ہائی ، ہائر سیکنڈری سکولز کی تعداد 150کرنیکا فیصلہ

ملتان ( اعجاز مرتضیٰ سے )حکومت پنجاب نے ضلع ملتان میں گرلز ہائی اور ہائر سیکنڈری سکولز کی تعداد بڑھا کر 150کرنے کا فیصلہ کرلیا تفصیل کے مطابق حکومت پنجاب نے (بقیہ نمبر28صفحہ12پر )

طالبات کی پک اینڈ ڈراپ کی مشکلات کے پیش نظر انہیں ان کے گھروں کے نزدیک ہی میٹرک اورانٹر میڈیٹ کی تعلیم دینے کا منصوبہ بنایا ہے ۔ اس سلسلے میں گرلز سکولز کی اپ گریڈیشن اور نئے گرلز سکولز کے قیام پر فوکس کیا ہے جس کے مطابق صوبے بھر میں اس سال2ہزارسے زائد گرلز سکولز اپ گریڈ کئے گئے ہیں بتایا گیا ہے کہ طالبات کو پک اینڈ ڈراپ کی مشکلات درپیش ہیں ۔ بیشتر والدین استطاعت نہ رکھنے کے باعث اپنی بیٹیوں کو پرائمری اور بڑی تعداد میں والدین مڈل کے بعد ہی گھر بٹھا لیتے ہیں ۔بہت کم بچیاں میٹرک کر پاتی ہیں ۔ اس لئے حکومت نے طالبات کی سہولت کے پیش نظر ان کو گھروں کے نزدیک ہی میٹرک اور انٹر میڈیٹ کی سہولیات فراہم کرنے کا منصوبہ بنایا ہے جس کے تحت صوبے بھرمیں اس سال 2ہزار سے زائد گرلز سکولز اپ گریڈ و نئے قائم کئے ہیں ۔اس سلسلے میں ضلع ملتان میں مزید 48 گرلز ہائی اور ہائر سیکنڈری سکولز قائم و اپ گریڈ کئے ہیں جس کے بعد یہاں گرلز و بوائز ہائی اور ہائر سیکنڈری سکولزکی تعداد 67سے بڑھ کر 115تک پہنچ چکی ہے اور حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ ضلع ملتان میں گرلز ہائی اور ہائر سیکنڈری سکولز کی تعداد مزید بڑھا کر 150کر دی جائے ۔آئندہ سال یہ منصوبہ مکمل کیاجائے گا۔ اس سلسلے میں ایلمنٹری سکولز کو اپ گریڈ کیا جائے گا اور نئے سکولز بھی قائم کئے جائیں گے ۔ واضح رہے کہ حکومت پنجاب پہلے ہی فیصلہ کر چکی ہے کہ جن ہائی سکولز میں طالبات کی تعداد 100اور اس سے زائد ہے اور رقبہ 4کنال یا اس سے زائد ہے تو ان کو ہائر سیکنڈری کا درجہ دے دیا جائے گا اور آئندہ سال سے وہاں انٹر میڈیٹ کی کلاسز شروع کی جائیں گی ۔

سکولز تعداد

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...