ایف آئی اے کی گردہ پیوندکاری اور فروخت کیخلاف مہم تیز

ایف آئی اے کی گردہ پیوندکاری اور فروخت کیخلاف مہم تیز

ملتان(کرائم رپورٹر)ایف آئی اے حکام نے گردہ کی پیوند کاری اور فروخت کے خلاف ملک گیر مہم کو تیز کرتے ہوئے ایف آئی اے ملتان سے معاونت حاصل کر لی ہے ۔یادرہے (بقیہ نمبر44صفحہ12پر )

کہ قبل ازیں گردوفروشی کے منظم گروہ کے سرگرم ہونے کے انکشاف پر ایف آئی اے ملتان نے نوشہرہ کے علاقے پبی کے نجی ہسپتال کے آپریشن تھیٹر میں چھاپہ مارکر گردوں کی غیر قانونی پیوندکاری کرتے ہوئے حیات آباد میڈیکل کمپلیکس کے یورولوجسٹ ڈاکٹرعبدالعزیز،دو ٹیکنیشن فاروق احمد،محمد بلال اور نوید احمد،میل نرسنگ اسسٹنٹ کامران احمداورحشمت اللہ،اینستھیزیا سپیشلٹ عبدالرحمان،ڈرائیور شاہد اقبال کو حراست میں لیا تھا ۔اس سلسلے میں ملتان ودیگر شہروں میں بھی ملزمان کے خلاف ثبوت اکٹھے کئے گئے تھے اور کیس کو منطقی انجام تک پہنچانے کیلئے ایف آئی اے پشاور نے خصوصی ٹیم تشکیل دی تھی۔ اس سلسلے میں ملتان ٹیم کو بھی دیگر شواہد اور ثبوت اکھٹے کرنے کا ٹاسک دیا گیا تھا ۔جس کیلئے کارروائی کرتے ہوئے ایف آئی اے ملتان کے ایس ایچ او ممتاز قریشی اور انسپکٹر رانا عبدالوکیل اکھٹے ہونے والے شواہد اور کارروائی کی رپورٹ سمیت پشاور روانہ ہوگئے ۔جہاں انہوں نے پشارو کی ٹیم کے ہمراہ ملزمان کا مزید دو روزہ ریمانڈ لے کر کارروائی شروع کر دی ہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...