وفاق کے استحکام کیلئے سرائیکی صوبہ ناگزیر ہوچکاہے‘ عطاء اللہ عیسیٰ خیلوی

وفاق کے استحکام کیلئے سرائیکی صوبہ ناگزیر ہوچکاہے‘ عطاء اللہ عیسیٰ خیلوی

ملتان (سٹی رپورٹر)سرائیکستان قومی کونسل کے صدر ظہور دھریجہ سے گفتگو کرتے ہوئے عالمی شہرت یافتہ فوک سنگر اور تحریک انصاف کے رہنماء عطاء اللہ خان عیسیٰ خیلوی نے کہا ہے کہ سرائیکی صوبے کیلئے میری جان بھی حاضر ہے ۔انہوں نے کہا کہ 16اکتوبر کو ملتان پہنچ کر سرائیکستان لانگ مارچ (بقیہ نمبر45صفحہ12پر )

میں بھرپور شرکت کروں گا۔انہوں نے کہا کہ میں نے پوری زندگی سرائیکی زبان کی خدمت کیلئے وقف کی ہے اس کا مجھے وسیب کی طرف سے محبتوں کا جو صلہ ملا ہے میں اسے فراموش نہیں کرسکتا۔انہوں نے کہا کہ سرائیکی ماں بولی کی محبت ہمیں ورثے میں ملی ہے ،انہوں نے کہا کہ سرائیکی صوبہ وفاق پاکستان کے استحکام کیلئے ضروری ہوچکا ہے ہم صوبہ سرائیکستان کے قیام کیلئے ہر اس جدوجہد میں شریک ہونگے جو وسیب کے حقوق اور صوبے کے قیام کیلئے ہوگی۔ظہور دھریجہ نے شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ میانوالی سرائیکی وسیب کا مرکز ہے اور جہاں بھی سرائیکی کا ذکر آتا ہے وہاں میانوالی اور عطاء اللہ خان عیسیٰ خیلوی کا ذکر ضرور آتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ قوموں کی زندگی میں مشاہیر کی بہت اہمیت ہوتی ہے اور عطاء اللہ خان عیسیٰ خیلوی ایسے سرائیکی لیجنڈ ہیں جس پر سرائیکی قوم جتنا فخر کرے کم ہے انہوں نے کہا کہ 15اکتوبر کو سندھ سرائیکستان بارڈر سے قافلہ شروع ہوگا اور 16اکتوبر کو ملتان میں اس کے پہلے مرحلے کا اختتام ہوگاہماری تمام شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد خصوصاً میڈیا اور انسانی حقوق کیلئے کام کرنیوالی تنظیموں سے درخواست ہے کہ وہ اس لانگ مارچ میں بھرپور شرکت فرمائیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...