بینظیر بھٹو قتل کیس میں سزا یافتہ پولیس آفیسرز کی ضمانت پر رہائی چیلنج

بینظیر بھٹو قتل کیس میں سزا یافتہ پولیس آفیسرز کی ضمانت پر رہائی چیلنج

اسلام آباد(آن لائن)سابق وزیراعظم بینظیر بھٹو قتل کیس میں سزا یافتہ پولیس افسران کی ضمانت پر رہائی کو سپریم کورٹ میں چیلنج کردیا گیا ہے ، افسران کی رہائی کیخلاف پیپلزپارٹی کے شہید کارکن کی بیوہ رشیدہ بی بی نے لطیف کھوسہ ایڈووکیٹ کے ذریعے درخواست دائر کی ہے جس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ ہائیکورٹ کا دونوں ملزموں کو ضمانت پر رہا کرنے کا فیصلہ قانون اور حقائق کے مطابق نہیں، ٹرائل کورٹ نے دونوں افسران کو سترہ سال سزا سنائی جبکہ ہائیکورٹ میں ملزموں کی اپیل زیر التوا رکھ کر عدالت نے ملزموں کی سزا معطل کر دی، درخو ا ست میں عدالت کے سزا معطلی کے طریقہ کار کو بد نیتی پرمبنی اور قانون کے منافی قرار دیتے ہوئے سپریم کورٹ سے استدعا کی گئی ہے کہ سعو د عزیز اور خرم شہزاد کی ضمانت منسوخی کا حکم دیا جائے، درخواست میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ بینظیر شہید کے وارث ملزموں کی پھانسی کی سزا چاہتے ہیں، فوجداری سازش مقدمہ میں ثابت ہو چکی ہے، ہائیکورٹ نے شواہد اور حقائق کا درست جائزہ نہیں لیا، مقدمے کو چلتے دس سال ہو چکے ہیں، سعود عزیز نے اس دوران اپنی سرکاری پوزیشن کا غلط استعمال کیا، بینظیر بھٹو کو سفاک طریقے سے قتل کیا گیا، واقعہ میں 23افراد شہید اور71زخمی ہوئے تھے۔

رہائی چیلنج

مزید : صفحہ آخر


loading...